The news is by your side.

حج کے دوران ہر سال غلاف کعبہ کو اونچا کیوں کردیا جاتا ہے؟

ریاض: حج قریب آتے ہی ہر سال کی طرح اس سال بھی غلاف کعبہ کو 3 میٹر اوپر کردیا گیا، یہ کارروائی اس لیے کی جاتی ہے تاکہ حج کے دوران غلاف کعبہ کو نقصان نہ پہنچے۔

سعودی ویب سائٹ کے مطابق سعودی عرب میں مسجد الحرام کی انتظامیہ نے نئے حج موسم پر غلاف کعبہ کا نچلا حصہ اوپر اٹھا دیا ہے، ہر برس کی طرح اس سال بھی یہ کارروائی مسجد الحرام اور مسجد نبوی انتظامیہ کے سربراہ اعلیٰ ڈاکٹر عبد الرحمٰن السدیس کی زیر نگرانی مکمل کی گئی۔

مسجد الحرام کی انتظامیہ نے تقریباً 3 میٹر تک غلاف کعبہ اوپر کیا ہے جبکہ چاروں جانب سے 2 میٹر چوڑے سفید کاٹن کے کپڑے سےاٹھائے گئے غلاف کعبہ کو ڈھک دیا گیا۔

غلاف کعبہ اٹھانے کی کارروائی میں غلاف کعبہ فیکٹری کے 50 ہنر مندوں نے حصہ لیا، یہ سب کارکن اس کام کے ماہر ہیں۔

خیال رہے کہ غلاف کعبہ رمضان اور حج ایام میں اوپر اٹھایا جاتا ہے، غلاف کعبہ 3 میٹر تک اٹھانے کی کارروائی اس لیے کی جاتی ہے تاکہ حج کے دوران غلاف کعبہ کو نقصان نہ پہنچے۔

اس سال بہت کم تعداد میں حجاج ہوں گے لہٰذا اس اقدام کا بنیادی مقصد زائرین کو کرونا وائرس سے بچانا ہے، حج ایام ختم ہوتے ہی غلاف کعبہ کو سابقہ پوزیشن میں بحال کر دیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں