The news is by your side.

Advertisement

مجالس اور جلوسوں کو فول پروف سیکیورٹی دی جائے، گورنر سندھ

کراچی: گورنر سندھ نے کہا کہ صوبے میں تمام مذاہب و مسالک کو آئین و قانون کے تحت مذہبی و مسالکی عبادات کی ادائیگی کی مکمل آزادی حاصل ہے مذہبی و مسالکی ایام میں پر امن عبادتوں کی ادائیگی کے لئے صوبہ میں فول پروف سیکیورٹی کے انتظامات حکومت کی اہم ذمہ داری ہے۔

تفصیلات کے مطابق گورنر سندھ ڈاکٹر عشرت العباد خان نے چیف سیکریٹری سندھ محمد صدیق میمن،ڈائریکٹر جنرل رینجرز میجر جنرل بلال اکبر،ڈپٹی مئیر کراچی ارشد وہرہ ،انسپکٹر جنرل پولیس سندھ اے ڈی خواجہ ، ایڈیشنل آئی جی مشتاق مہر اور مجالس و جلوسوں کے منتظمین سے رابطہ کرکے ان سے محرم الحرام کی مجالس ،جلوسوں کی سکیورٹی اور صفائی ستھرائی کے حوالہ سے معلومات حاصل کیں ۔

گورنر سندھ نے تمام متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ فول پروف سیکیورٹی کو ہر حال میں یقینی بنایا جائے اس ضمن میں جلوسوں کے راستوں پر نگراں کیمروں کو مکمل طور پر فعال رکھا جائے تاکہ آغاز سے اختتام تک تمام جلوسوں کی مکمل نگرانی کی جاسکے۔

انہوں نے ڈپٹی میئر ارشد وہرہ کو ہدایت کی کہ امام بارگاہوں ،مساجد اور مجالس کے مقامات کے باہر اور جلوسوں کے راستوں پر صفائی ستھرائی کو بھی یقینی بنایا جائے۔ گورنر سندھ نے چیف سیکریٹری کو ہدایت کی کہ صوبہ کے کمشنروں اور ڈپٹی کمشنروں سے صورتحال کے بارے میں مسلسل آگاہی حاصل کی جائے۔

ڈاکٹر عشرت العباد نے قانون نافذ کرنے والے اداروں کی ہدایت کی کہ وہ اپنی ڈیوٹی کے دوران مکمل چوکس رہے، صوبے میں امن و امان کا قیام ہم سب کی ذمہ داری ہے جس کے لیے ادارے بہت اہم کردار ادا کررہے ہیں۔

انہوں نے عوام سے اپیل کی کہ تمام افراد قانون فافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ مکمل تعاون کریں اور کسی بھی مشکوک شخص کی اطلاع قانون نافذ کرنے والے اداروں کو دیں تاکہ بروقت کارروائی سے کسی بھی خوش گوار واقعے سے محفوظ رہا جا سکے۔

آپریشن ضرب عضب پر تبصرہ کرتے ہوئے گورنر سندھ نے کہا کہ ملک بھر میں جاری آپریشن سے امن و امان کی صورتحال بہت بہتر ہوئی ہے ضرورت اس امر کی ہے کہ اسے مزید مستحکم کیا جائے جس کے لیے قانون نافذ کرنے والے ادارے شب و روز مصروفِ عمل ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں