مطالبات نہ مانے گئے تو 27 دسمبر سے گو نواز گو مہم چلائیں گے، بلاول بھٹو -
The news is by your side.

Advertisement

مطالبات نہ مانے گئے تو 27 دسمبر سے گو نواز گو مہم چلائیں گے، بلاول بھٹو

لاہور : پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے دعوی کیا ہے کہ عوام کی مدد سے 2018 میں ملک کا وزیراعظم بنوں گا،مطالبات نہ مانے گئے تو 27 دسمبر کے بعد گو نواز گو مہم چلائیں گے۔

لاہور میں کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے سربراہ پیپلز پارٹی کا کہنا تھا کہ نیشنل ایکشن پلان جھنگ کے ضمنی الیکشن کے بعد ختم ہو گیا ہے اس لیے ضروری ہو گیا ہے کہ وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار کو ہٹا کر باصلاحیت اور کھرے بندے کو وزیر داخلہ بنایا جائے۔

انہوں نے کہا کہ اب تک ہمارا نعرہ گو نثار گو ہے لیکن 27 دسمبر تک ہمارے 4 مطالبات تسلیم نہ کیے گئے تو پھر کراچی سے پشاور تک نعرہ ”گو نواز گو“ ہو گا اور وزیراعظم کو بھرپور عوامی احتجاج کا سامنا کرنا ہوگا۔

بلاول بھٹو نے دعویٰ کیا کہ 2018ء میں عوام کی مدد سے ملک کا وزیراعظم بنوں گا اور جس طرح سندھ میں تبدیلی لے کر آیا ہوں اور اب پورے پاکستان میں تبدیلی لاؤں گا وزیراعظم ہاﺅس اور ایوان میں پیپلز پارٹی کا جھنڈا لہرائے گا۔

بلاول بھٹو زرداری نے عمران خان کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ پیپلز پارٹی اس وقت کے پی میں بہت مضبوط ہے لیکن خیبرپختونخواہ دہشت گردی کی سونامی میں ڈوب رہا ہے ،انہوں نے کارکنان کو عمران خان کے خلاف نعرے لگانے سے منع کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان میرا سب سے پسندیدہ ’چاچا‘ ہے جو اس وقت رو رہا ہے۔

کارکنوں نے ”گو نواز گو“ کے نعرے بھی بلند کئے جس پر انہوں نے کہا کہ”تخت رائے ونڈ سن لو! جیالے کیا نعرے لگا رہے ہیں۔“

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں