The news is by your side.

Advertisement

“دو کروڑ کے ڈونلڈ ٹرمپ”

میکسیکو : سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے چاہنے والوں کی تعداد بھی کم نہیں، کنزرویٹو پولیٹیکل ایکشن کانفرنس کے موقع پر سابق صدر کی شرکت کو ان کے حامیوں کی جانب سے اتنی اہمیت دی جارہی ہے کہ اس کے لیے ان کا سنہرا مجسمہ بھی تیار کیا گیا۔

اس حوالے سے غیر ملکی خبر رساں ادارے کی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا سنہری مجسمہ جو گذشتہ ہفتے کے آخر میں کنزرویٹو پولیٹیکل ایکشن کانفرنس میں منظر عام پر لایا گیا تھا ، میکسیکو میں نہیں بلکہ چین میں تیار  کیا گیا ہے۔

پولیٹیکو کی پلے بوک نے بدھ کے روز انکشاف کیا کہ 100،000 ڈالر (پاکستانی تقریباً 2 کروڑ روپے) کے مجسمے کے آرٹسٹ ٹومی زیگن نے سونے سے بنا ہوا یہ مجسمہ میکسیکو میں نہیں بنایا۔

یہ حقیت بھی سامنے آئی کہ مجسمہ دراصل میکسیکو نہیں بلکہ چین کی شیجیہ جوانگ ڈی اینڈ زیڈ مجسمہ کمپنی میں بنایا گیا تھا۔

زیگن نے پولیٹیکو کو بتایا تھا کہ وہ میکسیکو میں رہتے ہیں اور میکسیکو کے روساریتو میں ہی انہوں نے ہاتھ سے یہ مجسمہ بنایا تھا۔

زیگن کے بزنس پارٹنر نے جو موریکو نے اس خبر رساں ادارے سے رابطہ کیا اور بتایا کہ یہ مجسمہ چین میں تیار کیا گیا ہے۔

انہوں نے مزید بتایا کہ میں سچ ہی کہوں گا کیونکہ میں نے یہ مجسمہ فروخت کرنا ہے اس لیے مجھے سچ ہی بولنا چاہیئے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں