The news is by your side.

Advertisement

گوگل نے صارفین کو دی جانے والی سہولت واپس لے لی

معروف ٹیکنالوجی کمپنی گوگل نے گزشتہ سال اپریل 2020 میں اپنی ویڈیو کانفرنسنگ سروس میٹ کو تمام صارفین کے لیے مفت کردیا تھا جس کا مقصد کورونا وائرس کی وبا کے دوران باہمی رابطوں میں لوگوں کو سہولت فراہم کرنا تھا۔

تاہم اب ویڈیو کانفرنسنگ سروس میں لامحدود وقت تک گروپ ویڈیو کالز کی سہولت کو آخرکار ختم کردیا ہے، اب گوگل میٹ پر گروپ ویڈیو کال کا دورانیہ ان صارفین کے لیے صرف 60 منٹ تک ہوگا جو اس سروس کو مفت استعمال کرتے ہیں۔

گوگل کی جانب سے اس سروس کو مفت کیے جانے پر اعلان کیا گیا تھا کہ مفت ویڈیو کال کا دورانیہ 30 ستمبر 2020 کو 60 منٹ تک محدود کردیا جائے گا مگر بعد ازاں اس مدت کو 31 مارچ اور پھر 30 جون 2021 تک بڑھا دیا گیا تھا مگر اب اس بہترین سہولت کو ختم کردیا گیا ہے۔

کمپنی نے خود تو باضابطہ اعلان نہیں کیا مگر 9 ٹو 5 گوگل کے مطابق کمپنی نے اپنے سپورٹ پیج پر ایک نیا پیغام جاری کیا ہے جس میں بتایا گیا کہ صارفین کو وقت کی حد کے بارے میں کال کے 55 منٹ پورے ہونے پر ایک نوٹیفکیشن سے آگاہ کیا جائے گا۔

یہ نوٹیفکیشن اس کال پر موجود تمام افراد کو موصول ہوگا جس میں بتایا جائے گا کہ کال ختم ہونے میں 5 منٹ رہ گئے ہیں، اس دورانیے کو بڑھانے کے لیے میزبان گوگل اکائونٹ کو اپ گریڈ کرے (یعنی ماہانہ ایک مخصوص فیس ادا کرنا شروع کرے)۔

گوگل اکائونٹ کو اپ گریڈ کرنے کی کم از کم ماہانہ فیس 8 ڈالرز ہے جو فی الحال صرف 5 ممالک میں ہی دستیاب ہے۔ تاہم ایک گھنٹے کی پابندی 3 یا اس سے زیادہ افراد پر مشتمل ویڈیو کال پر ہوگی، ون آن ون کال کو مسلسل 24 گھنٹے تک جاری رکھا جاسکے گا۔

خیال رہے کہ گوگل میٹ میں زیادہ سے زیادہ 100 افراد کو ایک ویڈیو کال کا حصہ بنایا جاسکتا ہے۔ اس سے قبل یکم جون سے گوگل کی جانب سے فوٹوز کے لیے لامحدود مفت اسٹوریج کی سہولت کو بھی ختم کردیا گیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں