The news is by your side.

Advertisement

حکومت کی ’کےالیکٹرک‘ کو اضافی 500 میگاواٹ بجلی فراہمی کی پیشکش

اسلام آباد : وزارت بجلی نے لوڈشیڈنگ سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کے الیکٹرک کو ہرممکن معاونت فراہم کی جارہی ہے لیکن کے الیکٹرک کا نظام اضافی 500 میگاواٹ اٹھانے کی صلاحیت نہیں رکھتا۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان وزارت بجلی نے کے لیکٹرک سے متعلق جاری بیان میں کہا کہ بجلی پیداوار میں کمی حکومت کی طرف سے فیول فراہمی میں تعطل کامؤقف درست نہیں، کے الیکٹرک کو قومی گرڈ سے800 میگا واٹ بجلی فراہم کی جا رہی ہے۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ حکومت نےکےالیکٹرک کو اضافی500 میگاواٹ بجلی فراہم کرنے کی پیشکش کی، کےالیکٹرک کے سسٹم کی مجبوریوں کے باعث مزید بجلی فراہم نہیں کی جا سکتی۔

انہوں نے کہا کہ کے الیکٹرک نےسسٹم کی بہتری کےلیےکوئی سرمایہ کاری نہیں کی ہے، وفاقی کابینہ نے کراچی کےلیے1100میگاواٹ اضافی بجلی فراہمی کی منظوری دی، کے الیکٹرک کا سسٹم 2023 میں اضافی بجلی اٹھانے کی صلاحیت حاصل کرے گا۔

ترجمان نے کہا کہ کے الیکٹرک بجلی پیداوار کیلئے جتنی چاہے ایل این جی لے سکتا ہے اور کے الیکٹرک 290 ایم ایم مکعب فٹ گیس اور100 ایم ایم ایل این جی لے رہا ہے، حکومت نے 80 فیصد فرنس آئل کے الیکٹرک کو بجلی پیداوار کےلیے فراہم کر رکھا ہے۔

ترجمان کے مطابق دیگر پاور پلانٹس سے 30 ہزار ٹن فرنس آئل کے الیکٹرک کو فراہم کیا گیا ہے، حکومت کی ہدایت پرپی ایس او نے کے الیکٹرک کی ضروریات کےلیے ٹینڈر جاری کر دیا، کے الیکٹرک کےنئے پاور پلانٹ کے لیے 150 ایم ایم مکعب فٹ گیس فراہمی مختص کر دی۔

ترجمان وزارت بجلی کا مزید کہنا تھا کہ پلانٹ آئندہ سال سے کام شروع کرے گا، حکومت نے کے الیکٹرک کی مدد کیلئے خاطر خواہ اقدامات کیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں