site
stats
پاکستان

وفاقی حکومت کی جانب سے ایم کیوایم پرپابندی کے لیے کمیٹی بنا دی گئی

اسلام آباد : حکومت نے ایم کیو ایم پر پابندی کیلئے سپریم کورٹ میں ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے جب کہ اس سلسلے میں اٹارنی جنرل کی سربراہی میں 6 رکنی کمیٹی قائم کردی گئی ہے۔

اے آروائی نیوز رپورٹر کے مطابق حکومت کی جانب سے ایم کیو ایم کے خلاف آرٹیکل 17 کے تحت کارروائی کیلئے 6 رکنی کمیٹی قائم کردی گئی ہے جس کے سربراہ اٹارنی جنرل ہوں گے جبکہ اس میں چاروں سیکرٹریز داخلہ اور سیکرٹری قانون شامل ہیں۔

کمیٹی قائد ایم کیوایم کے پاکستان مخالف بیانات کا ریکارڈ جمع کرکے اس کا جائزہ لے گی اور 2 ہفتوں میں ریفرنس تیار کرکے حکومت کو بھیجے گی جس کے بعد حکومت سپریم کورٹ میں پارٹی پرپابندی عائد کرنے کا ریفرنس دائر کرے گی۔

قانونی ماہرین کا کہنا ہے کہ کمیٹی کی جانب سے سفارشات مرتب کرنے کے بعد حکومت 15 دن میں اسے سپریم کورٹ بھجوانے کی پابند ہوگی اورعدالت عالیہ کا فیصلہ حتمی فیصلہ ہوگا جسے تبدیل نہیں کرایا جا سکے۔

پاکستان بار کونسل کے سابق سربراہ کا کہنا تھا کہ ایم کیو ایم کے پارٹی کے آئین میں سے قائد ایم کیو ایم کا نام نکالنے سے کام نہیں بنے گا کیونکہ جس جلسے میں پاکستان مخالف تقریر کی گئی وہ جلسہ پارٹی کے ڈپٹی کنوینر نے منعقد کرایا تھا اور جو لوگ اب پارٹی چلا رہے ہیں وہ سب اس وقت جلسے میں موجود تھے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top