The news is by your side.

Advertisement

مسئلہ کشمیر کے حل تک خطے میں امن و استحکام ممکن نہیں، گورنر پنجاب

لاہور: گورنر پنجاب چوہدری سرور نے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر کے حل تک خطے میں امن و استحکام ممکن نہیں ہے۔

تفصیلات کے مطابق گورنر پنجاب چوہدری سرور سے جاپان کے سفیر اور کینیڈین ہائی کمشنر نے ملاقات کی، مسئلہ کشمیر خطے کی صورت حال سمیت دیگر ایشوز پر بات چیت کی گئی۔

گورنر پنجاب نے بھارتی جنگی جنون اور کشمیر کی صورت حال کا نوٹس لینے کا مطالبہ کیا۔

چوہدری سرور نے کہا کہ دنیا کی ذمہ داری ہے کہ بھارتی اقدامات کے خلاف کردار ادا کرے، کشمیر میں کرفیو اور بھارتی مظالم سے صورت حال انتہائی کشیدہ ہے۔

گورنر پنجاب نے سفارت کاروں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے ہمیشہ امن کی بات کی ہے، ہماری ترجیح امن اور مسائل کو حل کرنا ہے۔

مزید پڑھیں: مقبوضہ کشمیرمیں 46ویں روز بھی کرفیو

واضح رہے کہ مقبوضہ کشمیر میں آج مسلسل 46ویں روز بھی کرفیو برقرار ہے اور مواصلات کا نظام مکمل پر معطل ہے، قابض انتظامیہ نے ٹیلی فون سروس بند کررکھی ہے جبکہ ذرائع ابلاغ پرسخت پابندیاں عائد ہیں۔

کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق مواصلاتی نظام کی معطلی، مسلسل کرفیو اور سخت پابندیوں کے باعث لوگوں کو بچوں کے لیے دودھ، زندگی بچانے والی ادویات اور دیگر اشیائے ضروریہ کی شدید قلت کا سامنا ہے۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق وادی میں کرفیو کے باعث 3 ہزار 9 سو کروڑ کا نقصان ہو چکا ہے، وادی میں کھانا میسر ہے اور نہ ہی دوائیں۔ سرینگر اسپتال انتظامیہ کے مطابق کرفیو کے باعث روزانہ 6 مریض لقمہ اجل بن جاتے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں