The news is by your side.

Advertisement

ایک سال بعداکنامک سرگرمیوں کے نتائج دیکھنےکوملیں گے، گورنر اسٹیٹ بینک

اسلام آباد:گورنراسٹیٹ بینک رضاباقرکا کہنا ہے کہ ٹیکس پیئرزکی حوصلہ افزائی،نان ٹیکس پیئرزکوٹیکس نیٹ میں لاناہے، ایک سال بعداکنامک سرگرمیوں کے نتائج دیکھنےکوملیں گے۔

تفصیلات کے مطابق گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر ظہرانےکی تقریب سےخطاب کررہے تھے جس میں انہوں نے کہا کہ برآمدات کی صورتحال بھی کچھ بہترنہیں، پرائیویٹ سیکٹرزکوعالمی ایکسپورٹرزکےمقابلےمیں لاناہوگا۔

ان کاکہنا تھا کہ ایکسپورٹ سیکٹرکوگلوبل سیکٹرکی طرزپر منتقل کرنے کے لیے اقدامات کررہےہیں،تمام اسٹیک ہولڈرزکواعتمادمیں لیاجارہاہے۔ٹیکس پیئرزکی حوصلہ افزائی،نان ٹیکس پیئرزکوٹیکس نیٹ میں لاناہے۔

گورنر اسٹیٹ بینک نے کہا کہ وزیراعظم کی ہدایت پرایف بی آرمیں اصلاحات جاری ہیں۔آئی ایم ایف کےساتھ پاکستان کامعاہدہ کامیابی سےہوچکاہے جبکہ انٹرنیشنل کمیونٹی کے ساتھ بھی پارٹنرشپ پروگرام جاری ہیں۔

رضا باقر نے مزید کہا کہ ایف اےٹی ایف سےنکلنےکے لیے جامع اقدامات کئےگئےہیں۔ ملک میں ٹیکس سسٹم کاشفاف نظام لاناچاہتےہیں، پاکستان کواقتصادی اورمعاشی چیلنجزکاسامناہے۔ایک سال بعداکنامک نتائج دیکھنےکوملیں گے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ تاریخ میں کبھی اتناکرنٹ اکاؤنٹ خسارہ نہیں دیکھا، ایک وقت تھاجب پاکستان میں اتناکرنٹ اکاؤنٹ خسارہ نہیں تھا،معاشی خرابی کی وجہ ایکسچینج ریٹ کاسپلائی اورڈیمانڈ کےمطابق نہ ہوناتھا۔

ان کے مطابق جب موجود ہ حکومت نے انتظام سنبھالا اس وقت فارن ایکسچینج ریزروخطرناک حدتک کم ہوچکےتھے تاہم اب کرنٹ اکاؤنٹ خسارےپربہت حدتک قابوپالیا گیاہے۔

رضا باقر کا کہنا تھا کہ حالات کےپیش نظرکفایت شعاری مہم شروع کی گئی جسے وزیراعظم نےخود لیڈکیااور انتظامیہ اور عوام کو بھی اس کا شعوردیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں