The news is by your side.

Advertisement

کاسمیٹکس اشیاء پر 30 سے 40 فیصد سسبسڈی عائد

اسلام آباد : وزارت خزانہ نے کاسمیٹکس اشیاء پر 30 سے 40 فیصد سسبسڈی عائد کر دی گئی، دکانداروں کا کہنا ہے کہ اب مارکیٹ میں جعلی پروڈیکٹس عام ہوں گی یعنی خواتین کا حسن ماند پڑ جائے گا ۔

تفصیلات کے مطابق اسحاق ڈار کا حسن پر وار اب خوبصورت نظر آنا محال ہو جائے گا، کاسمیٹکس اشیاء پر 30 سے 40 فیصد سسبسڈی عائد کر دی گئی، دکانداروں نے بھی خبر دار کر دیا ہے کہ اب جعلی اشیاء مارکیٹ میں عام ہو جائیں گی۔

خواتین نے حسن پر سمجھوتے سے انکار تو کردیا لیکن اس بات سے بھی پریشان ہیں کے رنگ گورا کرنے والی مہنگی کریمیں اب اور مہنگی ہو جائینگی اور اگر جعلی کریم لگائی تو مزید بد صورت نظر آئینگی۔

سسبسڈی  سے سرخی،نیل پالش،مسکارہ،آئی لائنر،لپ گلوس بلش آن سمیت ہر چیز کی قیمت بڑھ جائے گی۔

خواتین نے حکومتی فیصلے پر ناراضگی کا اظہار کیا ہے اور کہا کہ حکومت کم از کم خواتین کا تو خیال کرے ، میک اپ کے بغیر خواتین کیا کریں گی۔

کاسمیٹیکس پر ٹیکس سے خواتین کے ساتھ ساتھ ارکان پارلیمنٹ بھی ناخوش ہوگئے ہیں۔

یاد رہے کہ اس سے قبل حکومت نے موبائل فون، چاکلیٹ اور میک اپ کے سامان سمیت 731 درآمدری اشیاء پر ریگولیٹری ڈیوٹی میں 50 فیصد تک کا اضافہ کردیا تھا۔


مزید پڑھیں: تجارتی خسارے میں کمی کے لیے ریگولیٹری ڈیوٹی میں اضافہ


اعداد و شمار کے مطابق ڈیوٹی میں اضافے سے درآمدی بل میں 2 ارب ڈالر تک کی کمی متوقع ہے جبکہ اضافی ٹیکس وصولی میں 40 ارب روپے تک اس کے علاوہ ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں