The news is by your side.

Advertisement

سفاک پوتا دادا کو قتل کر کے پولیس کے ساتھ انہیں ڈھونڈنے کا ڈرامہ رچاتا رہا

نئی دہلی: بھارت میں ایک سفاک اور انسانیت سے عاری پوتے نے جائیداد کے لالچ میں اپنے دادا کا قتل کردیا اور لاش کا سر دھڑ سے الگ کردیا، بعد ازاں پولیس کے ساتھ مل کر 6 ماہ تک اپنے گمشدہ دادا کی تلاش کا ڈرامہ رچاتا رہا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست اتر پردیش کے ضلع بارہ بنکی میں پولیس 6 ماہ بعد گمشدگی کی ایک واردات حل کرنے میں کامیاب ہوئی جو آخر میں ایک لرزہ خیز قتل نکلا۔

پولیس نے قاتل پوتے کو گرفتار کیا ہے جو گزشتہ 6 ماہ سے اپنے گمشدہ دادا کو ڈھونڈنے کا ڈرامہ رچا کر پولیس کو گمراہ کر رہا تھا۔ پولیس کے مطابق پوتے نے یہ مذموم حرکت زمین کے لالچ میں انجام دی۔

مقتول رادھے شیام کی گمشدگی کی رپورٹ 6 ماہ قبل ان کی اہلیہ نے درج کروائی تھی اور اس موقع پر ان کا پوتا بھی ان کے ساتھ تھا۔

6 ماہ بعد اہلیہ نے پولیس کے سامنے شبہ ظاہر کیا کہ اس کے پوتے سہدیو نے ہی رادھے شیام کا قتل کر کے لاش کہیں چھپا دی ہے، پولیس کو بھی اس معاملے میں سہدیو پر شبہ تھا جس کے بعد پولیس نے سہدیو کو گرفتار کر کے اس سے تفتیش شروع کردی۔

پولیس نے سہدیو سے سختی سے پوچھ گچھ کی تو سہدیو نے اپنے جرم کا اعتراف کرلیا۔

پولیس کے مطابق مقتول رادھے شیام کی 3 بیٹیاں اور 1 بیٹا تھا، سنہ 2000 میں سہدیو کی پیدائش کے 7 روز بعد اس کے والد کا انتقال ہو گیا تھا۔

سہدیو کو اس کی والدہ اپنے ساتھ لے کر اپنے والدین کے گھر چلی گئی تھی، اس دوران رادھے شیام نے اپنی تمام بیٹیوں کی شادی کر دی اور تنہا ہونے کی وجہ سے سہدیو کو اپنے ساتھ لے آیا۔

بڑے ہونے کے بعد سہدیو وقتاً فوقتاً اپنے دادا پر دباؤ ڈالتا رہا کہ وہ اپنی زمین اس کے نام کردیں، وہ چاہتا تھا کہ دادا اپنی جائیداد میں سے بیٹیوں کو حصہ نہ دیں۔

تاہم جب اس معاملے میں وہ اپنے دادا کا ذہن بنانے میں ناکام رہا تو اس نے موقع پا کر انہیں قتل کردیا، لاش کو چھپانے کے لیے وہ اسے ایک باکس میں رکھ رہا تھا تاہم لاش کا قد لمبا تھا جس کے باعث سفاک پوتے نے دادا کا سر دھڑ سے الگ کیا اور سر اور دھڑ باکس میں ڈال کر تالاب میں پھینک دیا۔

پولیس کی تفتیش کے دوران لاش کی نشاندہی پر پولیس نے تالاب سے لاش برآمد کی اور قاتل کو سلاخوں کے پیچھے دھکیل دیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں