The news is by your side.

Advertisement

یونان نے تارکین وطن کو آگ لگا دی، ترکی نے بچا لیا، ویڈیو جاری

یونان کی جانب سے تارکین وطن کے خلاف انسانیت سوز مظالم کا سلسلہ تھم نہ سکا اور یورپ ‏سمیت عالمی طاقتیں اس بربریت پر آنکھیں بند کیے ہوئے ہیں۔

یونان کی جانب سے بے یارو مددگار تارکین وطن کو یورپ میں داخلے سے روکنے کے لیے جلائے ‏جانے کا انکشاف ہوا ہے۔

ترک وزیر داخلہ سلیمان سوئے نے یونان لاء اینڈ آرڈر فورسز کی طرف سے تارکین وطن کو زندہ ‏جلانے پر مبنی ویڈیو شیئر کی ہے۔

وزیر داخلہ نے لکھا کہ یونان کی جانب سے تارکین وطن کو پیٹرول چھڑک کر آگ لگانے کا عمل ‏یورپ کی زیرنگرانی قتل عام کے مترادف ہے۔

انہوں نے کہا کہ یورپ کی طرف سے یونان کے کرتوتوں پر خاموشی اختیار کی رکھی تو تاریخ میں ‏اس کا ذکر برائی کی پشت پناہی کرنے والوں کے طور پر کیا جائے گا۔

تارکین وطن کی کشتی کو ترکی کی جانب جبری طور پر دھکیلا گیا اور ترک کوسٹ گارڈ نے فوری ‏ریسکیو آپریشن کرتے ہوئے تمام سوار افراد کو بچا لیا۔

تارکین وطن نے بتایا کہ یونانی اہلکاروں کی جانب سے ان پر پیٹرول چھڑک کر آگ لگائی گئی اور ‏زبردستی ترکی کی جانب دھکیلا گیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں