The news is by your side.

Advertisement

کراچی کے علاقے لیاری میں دستی بم حملہ

کراچی کے علاقے لیاری میں گینگ وار کے کارندے ایک بار پھر سر اٹھانے لگے، بہار کالونی میں زیرتعمیر عمارت میں دستی بم حملہ، دس سالہ بچی سمیت 2 افراد زخمی ہوگئے۔

پولیس کے مطابق نامعلوم افراد کی جانب سے بلڈر عزیز بلوچ کی زیر تعمیر عمارت پر دستی بم سے حملہ کیا گیا جس سے وہاں موجود الطاف احمد اور اس کی دس سالہ بیٹی ایمان زخمی ہو گئی جنہیں طبی امداد کے لیے سول اسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔

واقعے کے بعد پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی اور تحقیقات کا آغاز کر دیا گیا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ دستی بم حملہ گینگ وار کے کارندوں کی جانب سے کیا گیا۔

لیاری سے رکن سندھ اسمبلی سید عبدالرشید نے بہارکالونی لیاری میں ہونے والے دہشت گردی کے واقعہ کی شدید مذمت کی ہے اور دھماکے میں زخمی افراد کے اہلخانہ سے ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ سندھ حکومت امن و امان کی صورتحال کو بہتر بنانے کے لیے فوری اقدامات کرے۔

انہوں نے کہا کہ میرے گھر سے چند قدم پر یہ افسوسناک واقعہ ہوا لیاری سمیت پورے شہر کے امن کو تباہ کرنے کی کوشش کی جارہی ہے دہشت گردی کا یہ واقعہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے وزیر اعلیٰ سندھ اور آئی جی سندھ لیاری میں ہونے والے اس افسوسناک واقعہ کا فوری نوٹس لیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں