The news is by your side.

Advertisement

اپنی مالک کو کروڑ پتی بنانے والی ’منحوس بلی‘ مرگئی

انٹرنیٹ کی دنی پر ’گرمپی کیٹ‘ کے نام سے مشہور منحوس بلی انتقال کرگئی ، اس بلی کے دو ملین سے زائد مداح تھے اور انٹرنیٹ استعمال کرنے والے ہر شخص نے کم از کم ایک مرتبہ اس کی تصویر ضروردیکھی ہوگی۔

گزشتہ روز جاری ہونے والے ایک بیانے میں منحوس بلی کے مالک نے کہا ہے کہ اس کی ہر دلعزیز کیٹ سات سال کی عمر میں پیشاب کے انفیکشن کے سبب چل بسی۔

اس بلی کا آبائی وطن ایری زونا تھااور یقیناً اس کے سبب لاکھوں لوگ مسکراتے تھے۔ بلی کا اصل نام ’ٹارٹر ساس‘ تھا اور سنہ 2012 میں اس کی پہلی تصویر بطور میم وائرل ہوئی تھی۔

بلی کی وجہ شہرت اس کے چہرے کےمخصوص تاثرات بنے جن کا سبب اس کا پستہ قد اور منہ میں اضافی دانت تھے ، جو اسے ایک ناراض سی شکل عطا کرتے تھے ، اور یہی چہرہ اس کی وجہ شہرت بنا۔

بلی نے اپنی مالک تابیتھا بندیسن کےساتھ پوری دنیا کا سفر کیا تھا۔ سنہ 2014 سے اس نے دنیا کے مختلف ممالک کے ٹی وی شو ز میں شرکت کرنا شروع کی تھی اور اس نے اپنی ایک ایسی فلم میں بھی کام کیا جس کا مرکزی کردار یہ خود تھی۔

سنہ 2015 میں سان فرانسسکو کے مادام تساؤ میوزیم میں اس کا مومی مجسمہ بھی رکھا گیا ، جو کہ یقیناً ایک ریکارڈ ہے۔ اس کے انسٹا گرام اکاؤنٹ پر فالوورز کی تعداد 20 لاکھ سے زائد ہے۔

سنہ 2018 میں اس کی مالکن کو کاپی رائٹ کے مد میں سات لاکھ دس ہزار ڈالر کی خطیر رقم ملی تھی ، اس کے علاوہ بھی اسی منحوس بلی کے سبب اس کی مالک بے پناہ دولت حاصل کرچکی ہے۔

بلی کی خاتون مالک کا کہنا ہے کہ اس سے قبل وہ ویٹرس کا کام کرتی تھی ، تاہم بلی کو شہرت ملنے کے چند ہفتے بعد ہی انہوں نے اپنا کام چھوڑدیا تھا اور بلی کو مزید شہرت دلانے پر توجہ مرکوز کردی تھی۔ وہ اپنی اس ’منحوس بلی‘ کے لیے بے حد اداس ہیں جس نے نہ صرف ان کے دن پھیر دیے بلکہ خود بھی دنیا بھر میں لاکھوں مداحوں کے دل میں جگہ بنا گئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں