گجرنالہ گرینڈ آپریشن، انتظامیہ کی ناقص منصوبہ بندی کے باعث مکین پریشان -
The news is by your side.

Advertisement

گجرنالہ گرینڈ آپریشن، انتظامیہ کی ناقص منصوبہ بندی کے باعث مکین پریشان

کراچی : گجر نالے پر قائم تجاوازات کے خلاف گرینڈ آپریشن کا دوسرا دن متاثرہ افراد کو کھلے آسمان تلے رات بسر کرنی پڑی۔

تفصیلات کے مطابق گجر نالے پر قائم ناجائز مکانات کے خلاف گزشتہ روز شروع ہونے والے گرینڈ آپریشن آج دوسرے روز بھی جاری ہے، گزشتہ روز مسمار کئی بھینسوں کے باڑوں سمیت مکانات کو بھی مسمار کیا گیا۔

متاثرہ افراد نے مکانات مسمار ہونے کے بعد رات کھلے آسمان تلے گزاری ، متاثرہ افراد کا کہنا ہے کہ ’’انتظامیہ نے بغیر کسی نوٹس کے گھروں کو مسمار کردیا ہے جس کے باعث اُن کو مکانات اور  اُس میں موجود سامان مکمل طور پر تباہ ہوگیا ہے‘‘۔

انتظامیہ نے اس بات کا دعویٰ کیا ہے کہ مکینوں کو پیر کے روز تک کی مہلت دی گئی ہے جس کے بعد آپریشن تیزی سے شروع کیا جائے گا تاکہ نالے کو 60 فُٹ تک چوڑا کیا جاسکے، ڈی سی سینٹرل نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’’کسی بھی مہذب معاشرے میں غیرقانونی تعمیرات کے عوض حکومت کی جانب سے کسی بھی قسم کی کوئی امداد یا رہائش مہیاء نہیں کی جاتی، نالے کی چوڑائی میں 6 ماہ کا وقت درکار ہے‘‘۔

مزید پڑھیں : نکاسی آب میں رکاوٹ : گجرنالے پر قائم مکانات اورباڑے مسمار

انہوں نے مزید کہا کہ ’’وزیر بلدیات کے احکامات موصول ہونے کے بعد مکانات کو مسمار کیا جارہا ہے، اس آپریشن میں سندھ حکومت کی جانب سے ہیوی مشینری فراہم کی گئی ہے تاکہ آپریشن کو جلد از جلد مکمل کیا جاسکے‘‘۔

ڈی سی سینٹرل نے کہا ہے کہ ’’اس آپریشن میں 10 ہزار سے زائد مکانات اور غیر قانونی طور پر قائم کیے کیے باڑوں کو مسمار کیا جائے گا تاکہ نکاسی آب کے لیے پیدا ہونے والی صورتحال پر قابو پایا جاسکے، انہوں نے انکشاف کیا کہ ’’گجر نالے پر تیس ہزار سے زائد غیر قانونی مکانات تعمیر کیے گیے ہیں جس کے باعث نالے میں نکاسی آب نہ ہونے سے انتظامیہ کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے‘‘۔

یہ بھی پڑھیں : وزیراعلیٰ کا کراچی کے چار اہم نالوں کی صفائی کا حکم، فنڈ جاری

متاثرہ افراد نے سندھ حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ ’’اُن کی عمر بھر کی جمع پونجھی ان مکانات میں لگئی ہوئی تھی، اگر حکومت ہمیں متبادل رہائش اور امداد فراہم نہیں کرے گی تو ہم روڈ پر آجائیں گے‘‘۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں