گجرانوالہ ہسپتال میں مریضوں کواسٹریچر میسر ہے اورنہ بستر -
The news is by your side.

Advertisement

گجرانوالہ ہسپتال میں مریضوں کواسٹریچر میسر ہے اورنہ بستر

گوجرانوالہ : پنجاب میں سرکاری ہسپتال میں مریضوں کو نہ تو اسٹریچر میسر ہیں اور نہ ہی بستر کی سہولت دستیاب ہے،مریض اپنے ساتھ چارپائی لے کر آتے ہیں، شہری مریضوں کو اپنی مد د آپ کے تحت لا کربستر کی تلاش میں  ہسپتال بھرکے چکر لگاتے ہیں، ملتان میں بھی ہسپتالوں کی حالت نہ بدلی، کمپاؤڈر نے وہیل چئیر پر بیٹھے مریض کو ہی ڈرپ لگا ڈا لی۔

تفصیلات کے مطابق گوجرانوالہ کے واحد سرکاری ہسپتال کی حالت انتہائی ناگفتہ بہ ہے، مریضوں کو ملنے والی بنیادی سہولیات نہ ہونے کے برابر ہیں۔

ہسپتال آنے والے مریض پہلے تو اپنے ساتھ آنے والے شخص کے کاندھوں پر دروازے سے اندر آتے ہیں کیونکہ ان کو لانے کیلیے اسٹریچر ہی نہیں ملتا، شہری مریضوں کیلیے اپنی چار پائی خود لے کر آتے ہیں، شدید بیمار افراد کیلیے بھی نہ بستر ہے اور اسٹریچر کی کوئی سہولت میسر نہیں۔

سرکاری ہسپتال کی بد انتظامی نے شہریوں کو آٹھ آٹھ آنسو رلا دیا، گذشتہ روز بھی مریض بیڈ نہ ملنے کی وجہ سے دربدر ہوتے رہے اورآج بھی شہری اپنے مریضوں کو بانہوں میں اٹھائے ہسپتال میں ادھر اُدھر چکر لگا تے رہے اور انتظامیہ کے کان پر جوں تک نہ رینگی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں