The news is by your side.

Advertisement

کراچی : گلشن اقبال میں عمارت میں آتشزدگی کا مقدمہ، کے الیکٹرک ذمہ دار قرار

کے بی سی اے قوانین کے خلاف ورزی کے باجود عمارت کی تعمیر کیلئے این او سی جاری کیا گیا، ایف آئی آر

کراچی : گلشن اقبال میں عمارت میں آتشزدگی سے دو شہریوں کے جاں بحق ہونے کا واقعہ کی مقدمہ درج کرلیا، ایف آئی آر میں کے الیکٹرک کو ذمہ دارقرار دیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے گلشن اقبال میں دو روز قبل17منزلہ عمارت میں لگنے والی آگ سے دو افراد کی ہلاکت کا مقدمہ پولیس نے اپنی مدعیت مین درج کرلیا ہے۔

ایف آئی آر کے متن میں کہا گیا ہے کہ عمارت میں آگ شاٹ سرکٹ کے باعث لگی، جس کا ذمہ دار کے الیکٹرک کا ادارہ ہے کیونکہ عمارت کی تعمیر بھی کے بی سی اے کے قوانین کے خلاف تھی اور اس خلاف ورزی کے باجود عمارت کی تعمیر کیلئے این او سی جاری کیا گیا۔

اس کے علاوہ ایس بی سی اے نے نقشہ اور فائر بریگیڈ نے فائر کلیئرنس کس طرح دی؟ ایف آئی آرکا متن میں مزید کہا گیا ہے کہ ملی بھگت سے عمارت کی تعمیر خلاف قوانین کی گئی، عمارت میں بنیادی سہولتیں نہ ہونے سے دو قیمتی جانیں ضائع ہوئیں۔

مزید پڑھیں: گلشن اقبال میں واقع عمارت میں لگنے والی آگ پر قابو پالیا گیا، 2 افراد جاں بحق

واضح رہے کہ دو روز قبل آتش زدگی کا واقعہ کراچی کے علاقے گلشن اقبال ممتاز منزل کے قریب پیش آیا تھا جہاں17منزلہ عمارت میں اچانک آگ بھڑک اٹھی۔ عمارت میں دفاتر ہیں اور رہائشی منازل پر شہری بھی رہائش پذیر ہیں۔

آگ لگنے کے باعث عمارت میں موجود متعدد افراد چھت پر چڑھ گئے۔ آگ لگنے کے فوراً بعد دو افراد جان بچانے کے لیے چھت سے کود گئے، تاہم دونوں اپنی جان کی بازی ہار گئے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں