The news is by your side.

Advertisement

حلب میں بمباری : تباہ شدہ عمارت سے دو بچوں کوزندہ نکال لیا گیا

حلب : شام میں ہونے والی بمباری اورتباہی کے بعد ملبے سے دو بچوں کو زندہ زخمی حالت میں نکال لیا گیا ہے، بمباری سے کئی عمارتیں ملیا میٹ ہوگئیں، ریسکیو عملہ بچوں کو بچانے کیلیے بروقت آن پہنچا اور زخمی ہونے والے دیگر افراد اور بچوں کو ملبے سے نکال کر اسپتال پہنچایا گیا۔

غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق حلب میں شامی طیاروں نے بچوں کے اسپتال، اسکول، بلڈ بینک اور ایمبولینس پر بم گرائے۔ ملبے میں دبے دوسرے بچے کو نکالنے کیلیے ریسکیو اہلکاروں نے سر توڑ کوششیں کیں اس دوران کو وہ ملبے میں دبے ہوئے بچے کو دلاسہ بھی دیتے رہے۔

ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ بمباری کےباعث عمارت کے ملبے تلےدبے زخموں سے چھلنی شامی بچےکو ریسکیو اہلکار نکالنے کیلئے کوشاں ہیں۔ بچے کوجیسے ہی ملبے سے نکالا گیا تو اہلکار نے اسے اٹھا کر فوری طبی امداد کیلئے اسپتال کی جانب دوڑ لگادی۔

یاد رہے کہ اس سے قبل شام کے دارالحکومت دمشق کے مشرق میں واقع شہر حراستا میں بچوں کے اسکول پر بمباری سے کم از کم 6 بچے جاں بحق اور درجنوں افراد زخمی ہوگئے تھے۔

انسانی حقوق کی تنظیم کا کہنا تھا کہ فضائی بمباری میں زخمی ہونے والےبچوں میں بیشتر کی حالت تشویش ناک ہے اوربمباری میں جاں بحق ہونے والے بچوں کے چہرے ناقابل شناخت ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں