The news is by your side.

Advertisement

پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز تین فروری کو بیرون ملک جائیں گے

لاہور: پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز نے عدالت کو آگاہ کیا ہے کہ وہ تین فروری کو بیرون ملک جائیں گے جبکہ 12 فروری کو ان کی وطن واپسی ہو گی۔

تفصیلات کے مطابق اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز  کی جانب سے لاہور ہائی کورٹ کودس دن کے لئے بیرون ملک دورے  سے متعلق آگاہ کردیا گیا ،حمزہ شہباز  تین فروری کو بیرون ملک  جائیں گے اور 12 فروری کو وطن واپس آئیں گے۔

یاد رہے حمزہ شہباز نے اپنا نام بلیک لسٹ میں شامل کرانے کے خلاف لاہور ہائی کورٹ سے رجوع کیا تھا اور عدالت نے حمزہ شہباز  کا نام لسٹ سے نکالنے کا حکم دیا تھا۔

عدالت نے حمزہ شہباز کو 10روز کے لئے بیرون ملک جانےکی اجازت دی تھی اور کہا تھا کہ حمزہ شہباز 10 دن کے بعدواپس آ کر انکوائری کا سامنا کریں ۔

مزید  پڑھیں:  حمزہ شہباز شریف کو 10دن کے لیے بیرون ملک جانے کی اجازت مل گئی

حمزہ شہباز کے وکیل نے عدالت کو یقین دہانی کرائی تھی کہ حمزہ شہباز دس دنوں میں واپس پاکستان آ جائیں گے جبکہ لاہور ہائی کورٹ نے حمزہ شہباز کی درخواست پر وفاقی حکومت کو نوٹس جاری کیے تھے اور جواب مانگاتھا۔

بعد ازاں  وفاقی وزارت داخلہ نے حمزہ شہباز کا نام بلیک لسٹ سے نکال دیا تھا۔

واضح رہے کہ 11 جنوری 2019 کو قومی احتساب بیورو (نیب) نے چنیوٹ میں رمضان شوگر ملز کیس کا ریفرنس مکمل کرکے شہباز شریف اور حمزہ شہباز کو ملزم نامزد کیا تھا، چیئرمین نیب کی منظوری کے بعد ریفرنس عدالت میں دائر کیا جائے گا۔

خیال رہے کہ اس وقت شریف خاندان کے مختلف افراد کو بدعنوانی کے الزامات کے تحت مقدمات کا سامنا ہے، جن میں شہباز شریف کے صاحب زادہ حمزہ شہباز بھی شامل ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں