The news is by your side.

Advertisement

حویلیاں حادثہ : اے ٹی آر طیارے کے بلیک باکس کی رپورٹ جاری

کراچی : حویلیاں میں حادثے کا شکار اے ٹی آر طیارے کا انجن خراب تھا، طیارہ چار ہزار فٹ کی بلندی پر اسپیڈ ڈراپ کرگیا، بلیک باکس کی تحقیقاتی رپورٹ میں تصدیق کردی گئی۔

تفصیلات کے مطابق سات دسمبر 2016کو ہونے والے سانحہ حویلیاں میں پی آئی اے کے تباہ شدہ اے ٹی آر طیارے کے بلیک باکس کی تحقیقاتی رپورٹ منظر عام پرآگئی، پی آئی اے نے اے ٹی آر حادثہ کی ابتدائی رپورٹ جاری کردی۔

تحقیقاتی رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ دوران پروازاے ٹی آر طیارے کا ایک انجن اچانک بند ہوگیا تھا۔ انجن بند ہونے کی اطلاع کپتان نے فوری طور پرکنٹرول ٹاور کو دی تھی، کپتان مے ڈے، مے ڈے کی کال کرتا رہا لیکن کچھ ہی دیر بعد طیارہ زمیں بوس ہوگیا۔

فلائٹ ڈیٹاریکارڈ کے مطابق چار ہزارفٹ کی بلندی پر طیارے نے توازن کھو دیا تھا، پروازپی کے 661  طیارے کے پروپلر کا حب فری ہوگیا تھا، جس کی وجہ سے جہاز کنٹرول سے باہرہوا، پنکھے فری ہونے کی وجہ سے طیارے کنٹرول نہ ہوسکا، جس کی وجہ سے کپتان کو مہلت ہی نہ ملی کہ وہ طیارے کو کسی جگہ پراتارسکے۔

ذرائع کے مطابق طیارے کے پرزہ جات مذکورہ کمپنیوں کو فرانس اورکینیڈا بھیجے گئے ہیں، رپورٹ آنے میں تین سے چار ماہ لگیں گے، جس کے بعد طیارے حادثے کی مکمل رپورٹ بھی منظر عام پر لائی جائے گی۔

یاد رہے کہ حویلیاں حادثے کے بعد سابق چئیرمین پی آئی اے اعظم سہگل نے دعویٰ کیا تھا کہ اے ٹی آر طیارے میں خرابی ہو ہی نہیں سکتی۔

مزید پڑھیں : طیارہ حادثہ: جنید جمشید سمیت سینتالیس افراد شہید

یاد رہے کہ سات دسمبر 2016 کو پی آئی کی پرواز چترال سے اسلام آباد جارہی تھی جسے حویلیاں کے قریب حادثہ پیش آیا، پرواز میں معروف مذہبی اسکالر جنید جمشید سمیت اڑتالیس مسافر جاں بحق ہوئے تھے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں