The news is by your side.

Advertisement

ہالی ووڈ فلم “بلیک پینتھر” کے ہیرو چاڈ وِک بوس مین چل بسے

لاس اینجلس : ہالی ووڈ کی مشہور فلم بلیک پینتھر کےاداکار چیڈوک بوسمین 43 سال کی عمر میں انتقال کرگئے، جس کی تصدیق ان کے اہل خانہ کی جانب سے کردی گئی۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری پیغام میں بتایا گیا ہے کہ بوس مین کا لاس اینجلس میں اپنے گھر پر انتقال ہوا جہاں ان کی اہلیہ اور دیگر خاندان والے ان کے ساتھ موجود تھے،

مارول اسٹوڈیو کی فلم ’بلیک پینتھر‘میں مرکزی کردار ادا کرنے والے 43سالہ اداکار چاڈ وک بوس مین بڑی آنت (کولون ) کے کینسر میں مبتلا تھے، میڈیا رپورٹ کے مطابق بوس مین نے کبھی بھی عوامی طور پر اپنی بیماری کے بارے میں بات نہیں کی تھی۔

اہل خانہ کی جانب سے ٹوئٹر پر دیے جانے والے پیغام میں کہا گیا کہ بے حد دکھ کے ساتھ بتانا پڑ رہا ہے کہ چاڈ وک بوسمین اب اس دنیا میں نہیں رہے۔

2016میں ان کے آنت کے کینسر کی تشخیص کی گئی تھی اور اس وقت وہ اس کے تیسرے مراحل میں تھے، تبھی سے ان کا علاج چل رہا تھا اس کے باوجود وہ کینسر کے چوتھے مراحل میں داخل ہو گئے۔‘‘انہوں نے پچھلے چار برسوں میں اپنی سرجری اور کیمیوتھراپی کے درمیان کئی فلموں کی شوٹنگ بھی کی۔

الی ووڈ اداکار چیڈوک بوسمین کی شہرت کو دوام 2016 میں بلیک پینتھر میں اداکاری کے جوہر دکھانے پر حاصل ہوا۔ انہوں نے ایوینجرز انفینٹیٹی وار اور ایونجرز: اینڈگیم میں بھی اداکاری کے جوہر دکھائے، ان کی حال ہی میں بننے والی فلم ڈا 5 بلڈز تھی، جو رواں سال کے شروع میں نیٹ فلکس پر ریلیز ہوئی۔ٓ

واضح رہے کہ چاڈوک بوس مین نے شرعات میں حقیقی کرداروں کی کہانیوں پر مبنی فلموں سے شہرت حاصل کی۔ انہوں نے 2013 کی فلم 42 میں بیس بال کے معروف کھلاڑی جیکی رابنسن کا کردار ادا کیا اور اس کے بعد 2014 کی فلم ‘گین آن اپ’ میں موسیقار جیمز براؤن کا کردار نبھایا۔ لیکن ان کی فلموں میں سب سے یادگار فلم بلیک پینتھر تھی جو 2018 میں ریلیز ہوئی تھی۔

بی بی سی اردو کے مطابق یہ پہلی سپر ہیرو فلم تھی جسے بہترین فلم کے آسکر اعزاز کے لیے نامزد کیا گیا تھا اور اسی تقریب میں اسے چھ اور اعزازت کے لیے بھی نامزد کیا گیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں