The news is by your side.

Advertisement

تھپڑ کھا کر کیسا لگا؟ فرانسیسی صدر سے بچی کا معصومانہ سوال

فرانس : فرانسیسی صدر سے بچی نے معصومانہ سوال کرتے ہوئے کہا تھپڑ کھا کر کیسا لگا؟ جس پر میکرون نے جواب دیتے ہوئے کہا بالکل اچھا نہیں لگا، کسی کو بھی ایسا نہیں کرنا چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق فرانسیسی صدر ایمانوئیل میکرون نے بوائس ڈی پکارڈی قصبے کے ایک اسکول کا دورہ کیا ، دورے کے موقع پر میکرون کو اس وقت ہزیمت کا سامنا کرنا پڑا جب ایک بچی نے سوال کیا کہ تھپڑ کھا کر کیسا لگا؟ آپ کی طبیعت کیسی ہے؟

فرانسیسی صدر ایمانوئیل میکرون نے بچی کی جانب مسکراتے ہوئے جواب میں کہا کہ میں ٹھیک ہوں لیکن مجھے بالکل اچھا نہیں لگا یہ اچھی بات نہیں ہوتی ہے، کسی کو بھی ایسا نہیں کرنا چاہیے۔

یاد رہے 8 جون کو صدر ایمانوئل میکرون کو اس وقت ایک شہری نے چہرے پر ‏تھپڑ رسید کیا جب وہ سرکاری دورے پر ڈروم پہنچے تھے، جس کی ویڈیو بہت وائرل ہوئی تھی ، جس میں دیکھا جاسکتا تھا کہ مذکورہ شخص نے ایک ہاتھ سے صدر کا ہاتھ مضبوطی سے تھامنے ‏کے بعد انہیں اپنی طرف دکھیلا اور دوسرے ہاتھ سے طمانچہ دے مارا۔

پولیس نے فرانسیسی صدر ایمانوئل میکرون کو تھپڑ مارنے والے شخص کو گرفتار کرلیا تھا اور بعد ازاں اسے قید کی سزا سنا دی گئی، زیرحراست ملزم کی شناخت 28 سالہ ڈیمن ٹیرل کے نام سے ‏ہوئی ہے جو قوم پرست دائیں بازو کے ‏نظریات سے متاثر تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں