شام میں صابن بنانے کا روایتی اور دلچسپ طریقہ -
The news is by your side.

Advertisement

شام میں صابن بنانے کا روایتی اور دلچسپ طریقہ

دنیا بھر میں روزمرہ کے عام استعمال کی اشیا کو تیار کرنے کے لیے نئی نئی مشینیں وجود میں آگئی ہیں تاہم شام میں صابن بنانے کے لیے ابھی بھی روایتی طریقہ استعمال کیا جاتا ہے جو نہایت دلچسپ ہے۔

شام کی سب سے بڑی صابن بنانے والی کمپنی سنہ 1945 سے صابن بنا رہی ہے۔ یہ صابن بنانے کے لیے صدیوں پرانا طریقہ استعمال کرتی ہے اور تاحال اسی طریقے پر قائم ہے۔

سب سے پہلے صابن بنانے کے لیے زیتون کا تیل نکالا جاتا ہے۔ اس کے بعد تیل کو پانی اور تیز پات کے پتوں کے ساتھ ابالا جاتا ہے۔ ابالنے کا یہ عمل 3 دن تک جاری رہتا ہے۔

اس کے بعد اس گرم آمیزے کو ایک کھلے کمرے میں مومی کاغذ پر پھیلا دیا جاتا ہے۔ اس کے بعد اسے ٹھنڈا ہونے کے لیے ایک دن کے لیے چھوڑ دیا جاتا ہے۔

اس کے بعد اسے کس طرح ٹکڑوں میں کاٹا جاتا ہے وہ آپ نیچے ویڈیو میں دیکھ سکتے ہیں۔

بعد ازاں ایک ایک صابن پر کمپنی کا لوگو ہاتھ سے چھاپا جاتا ہے۔

یہ شامی کمپنی جدید دور میں بھی اپنی روایات برقرار رکھے ہوئے اور یہی اس کی انفرادیت ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں