The news is by your side.

Advertisement

نواز شریف کو بیرون ملک کیسے لے کر جایا جائے؟ ن لیگ تذبذب کا شکار

لاہور: سابق وزیراعظم نواز شریف کو بیرون ملک لے جانے کے لیے مسلم لیگ ن تذبذب کا شکار ہے، ان کی روانگی کے لیے کمرشل پرواز اور ایئرایمبولینس دونوں بک کرلی گئیں۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف کی بیرون ملک روانگی آج یا کل متوقع تھی تاہم مسلم لیگ ن نواز شریف کی روانگی کو لے کر تذبذب کا شکار ہے اور ان کی بیرون ملک روانگی کے لیے کمرشل پرواز اور ایئرایمبولینس دونوں بک کرلی گئی ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ نواز شریف کے لیے بدھ کو کمرشل فلائٹ قطر ایئر کی کیو آر 629 میں بھی ٹکٹ بک کرلی گئی ہے، نواز شریف کے ساتھ شہباز شریف اور ڈاکٹر عدنان کی بھی ٹکٹیں بک ہیں۔

ذرائع کے مطابق کمرشل فلائٹ کے نئے ٹکٹ کے تحت نواز شریف کی واپسی 27 نومبر کو ہوگی، اس سے پہلے شریف خاندان نے روانگی کے لیے آج صبح کی بھی ٹکٹیں بک کی تھیں۔

مزید پڑھیں: نیب نے نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کی ذمہ داری وفاقی حکومت پر ڈال دی

ترجمان مسلم لیگ ن مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ نواز شریف کی طبیعت ٹھیک نہیں ہے، ان کی علالت سے متعلق ڈاکٹرز کی تشویش ہر لمحہ بڑھ رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ نواز شریف کو لے جانے کے لیے ایئرایمبولینس کا انتظام کرلیا گیا ہے، ایئرایمبولینس بدھ کو پہنچے گی، نواز شریف کی نازک صحت دیکھ کر ڈاکٹرز نے ایئرایمبولینس کا کہا ہے۔

مریم اورنگزیب نے کہا کہ نواز شریف کے پلیٹ لیٹس کی تعداد قابل سفر بنائی جائے گی، ان کو بیرون ملک لے جانے کے لیے طبی طور پر تیار کیا جائے گا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں