طوفان نیٹ‘ امریکا کی جنوبی ریاستوں سے ٹکرا گیا -
The news is by your side.

Advertisement

طوفان نیٹ‘ امریکا کی جنوبی ریاستوں سے ٹکرا گیا

واشنگٹن : وسطی امریکا اور گلف کوسٹ میں تباہی مچانے کے بعد نیٹ نامی طوفان امریکا کی جنوبی ریاستوں سے ٹکرا گیا‘ کیٹگری ون کے حامل طوفان سے لوزیانا میں سمندر بپھر گیا۔

تفصیلات کے مطابق نیٹ نامی اس طوفان کے سبب امریکی ریاست ریاست الباما،لوزیانا اور مسی سیپی میں تیز بارشوں کے بعد نظام زندگی مفلوج ہوکر رہ گیا ہے‘ طوفان کے باعث ہزاروں افراد نقل مکانی پر مجبور ہوگئے ہیں۔

امریکی محکمہ موسمیات کےمطابق نیٹ طوفان کے سبب 85 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے ہوائیں چل رہی ہیں اور 10 انچ بارش ہوسکتی ہے‘ اس طوفان کو پہلےدرجے یا کیٹیگری ون کا طوفان قرار دیا گیا ہے۔

مشرق سے مغرب تک تباہ کن سیلاب اورطوفان، یا الٰہی یہ ماجرا کیا ہے؟* 

لوزیانا کے نشیب میں واقع علاقے پہلے ہی زیرِ آب آچکے ہیں اور وہاں کے عوام شدید مشکلات کا شکار ہیں‘ اورلینز کے پمپنگ سسٹم کے بارے میں بھی تحفظات کا اظہار کیا جارہا ہے جو ماہ اگست میں آنے والے طوفان میں ناکارہ ہوکر رہ گیا تھا۔

دریائے مسی سیپی میں پانی کی سطح بلند ہونے کی وجہ سے اطراف کی چھ کائونٹیز میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ۔امریکی محکمہ موسمیات کے مطابق سمندری طوفان سے ریاست فلوریڈا کے متاثر ہونے کا بھی خطرہ ہے۔

لوزیانا‘ مسی سیپی اور الابامہ کے گورنروں نے اسٹیٹ ایمرجنسی نافذ کردی ہے‘ یہ تینوں ریاستیں اس موسم میں سب سے زیادہ متاثر ہوئی ہیں‘ کہا جارہا ہے کہ نیٹ ‘ سنہ 2005 میں آنے والے کترینہ نامی طوفان کے بعد اب تک کا سب سے طاقتور طوفان ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں