The news is by your side.

Advertisement

حیدرآباد کے پیاسے برتن اٹھائے سڑکوں پر نکل آئے، واسا کیخلاف نعرے بازی

حیدرآباد : کراچی کے بعد حیدرآباد میں بھی پینے کے پانی کا بحران پیدا ہوگیا، پانی کے حصول میں پریشان شہری برتن اٹھائے سڑکوں پر نکل آئے۔

تفصیلات کے مطابق حیدرآباد کے علاقے لطیف آباد نمبرگیارہ، ایوب کالونی سمیت دیگرعلاقوں میں گذشتہ کئی روز سے پانی کی فراہمی معطل ہے جس کی وجہ سے ہزاروں افراد پر مشتمل آبادی پانی کے حصول کیلئے شدید مشکلات کا شکار ہیں۔

پانی کی عدم فراہمی کے خلاف ایوب کالونی اوراس سے ملحقہ علاقوں کے مکینوں نے کمپری ہینسو چوک پر برتن اٹھاکر احتجاجی مظاہرہ کیا اور واسا کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔

مظاہرین کا کہنا تھا کہ گذشتہ ایک ماہ سے علاقے میں پانی کی فراہمی معطل ہے اور صاف پانی کی بجائے گٹر کا پانی فراہم کیا جارہا ہے جس کی وجہ سے وبائی امراض تیزی سے پھیل رہے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ محکمہ واسا کو متعدد بار صورتحال سے آگاہ کیا لیکن کوئی عملدرآمد نہیں کیا جاسکا ہے، انہوں نے مطالبہ کیا کہ فوری طور پر پانی کی فراہمی بحال کی جائے بصورت دیگر ایم ڈی واسا کے دفتر کا گھیراؤ کیا جائے گا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں