The news is by your side.

Advertisement

مجھےصفائی چاہیے، سوئپر بھرتی کرنا ایس ایس ڈبلیو ایم اے کا کام ہے، وزیراعلیٰ‌ سندھ

کراچی : وزیر اعلیٰ سندھ سیّد مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ ایس بی سی اے کے ملبہ کی ریگولرائزیشن کے اقدامات کررہے ہیں، قانونی تعمیرات کا ملبہ اٹھانے تعمیر کرنے والے کی ذمہ داری ہے۔

تفصیلات کے مطابق شہر قائد میں صفائی مہم سے متعلق وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی زیر صدارت اجلاس منعقد ہوا جس میں ڈپٹی کمشنر نے وزیر اعلیٰ کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ ریلوے کے پاس صفائی کا اسٹاف نہیں ہے اور تین ہزار ڈسٹ بن کی ضلع جنوبی میں قلت ہے۔

وزیر اعلیٰ کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ جی ٹی ایس سے 25 ہزار ٹن کچرا اٹھایا جارہا ہے، محمودآباد کی جی ٹی ایس سےکچرا اٹھالیا ہےاب اُس کو بند کررہے ہیں جبکہ ڈسٹرکٹ ایسٹ میں 6 ہزار ٹن کچرا لینڈ فل سائٹ پہنچا چکے ہیں۔

ڈپٹی کمشنر نے بتایا کہ 2362 صفائی کا عملہ برخاست کیا جاچکا ہے صرف 100 ورکر کام کررہے ہیں۔

وزیر اعلیٰ سندھ اجلاس میں کہنا تھا کہ ہم مہینے کی مہم کے آخری ہفتے میں جارہے ہیں، چاہتا ہوں اس مہینے کے اختتام تک صفائی کا کام برقرار رہے۔

مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ مجھےصفائی چاہیے، سوئپربھرتی کرنا ایس ایس ڈبلیو ایم اے کا کام ہے اگر چینی کام نہیں کررہےتوایکشن لیں، مجھے صفائی نظرآنی چاہیے۔

وزیر اعلیٰ سندھ سیّد مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ غیرقانونی تعمیرات ہرصورت بند کی جائیں اور قانونی تعمیرات کا ملبہ تعمیر کرنےوالا خود اٹھائے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں