site
stats
سندھ

ابراہیم ابڑو ایڈوکیٹ اغواء کیس کا ڈراپ سین

کراچی : ابراہیم ابڑوایڈوکیٹ کے اغواء کیس کا ڈارپ سین ہو گیا ہے،آئی جی سندھ پولیس اے ڈی خواجہ نے بتایا ہے کہ ابراہیم ابڑو ایڈوکیٹ کو ڈکیتی کے الزام میں ٹنڈو محمد خان سے گرفتار کیا گیا ہے۔

آئی جی سندھ پولیس اے ڈی خواجہ نے بتایا کہ تحقیقات کے بعد تصدیق ہو گئی ہے کہ ابراہیم ابڑو ایڈوکیٹ ڈکیت گینگ کا رکن ہے،ابراہیم ابڑو کی بینک سے رقم نکلوانے والوں سے رقم چھینا کرتا تھا،اسے ٹنڈو محمد خان سے گرفتار کیا گیا تھا۔

اس کے علاوہ ملزم بینک ڈکیتیوں میں بھی ملوث ہے جس کی سی سی ٹی وی ریکارڈنگ بھی موجود ہے جس میں ابراہیم ابڑو کو ڈکیتیاں مارتے ہوئے صاف دیکھا جا سکتا ہے۔

آخر میں آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے وکلاء برادری سے گزارش ہے کہ ابرہیم ابڑو ایڈوکیٹ سے لاتعلقی کا اظہار کرتے ہوئے اس کی سرپرستی سے گریزکریں،ایسے جرائم پیشہ افراد وکلاء برادری کی بدنامی کا باعث بنتے ہیں۔

واضح رہے چند روز قبل وکلاء برادری کی جانب سے ٹنڈو محمد خان کے ایک وکیل ابراہیم ابڑو ایڈوکیٹ کی سادہ لباس افراد کی جانب سے اغواء کیے جانے کی خبر پراحتجاج کیا گیا تھا جس میں سندھ پولیس سے مطالبہ کیا گیا تھا کہ ابراہیم ابڑو کو فی الفوربازیاب کرایا جائے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top