The news is by your side.

Advertisement

ایون فیلڈ ریفرنس :نواز شریف کی ضمانت منسوخی کی درخواست پر سماعت 15 ستمبر کو ہوگی

اسلام آباد : اسلام آباد ہائی کورٹ میں ایون فیلڈ ریفرنس میں نواز شریف کی ضمانت منسوخی کی درخواست پر سماعت 15 ستمبر کو ہوگی، نیب نے درخواست اعتراض دور کرکے دوبارہ دائر کی گئی۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ کے رجسٹرار آفس نے نیب کی ایون فیلڈ ریفرنس میں نواز شریف کی ضمانت منسوخی کی درخواست 15ستمبر کے لیے مقررکردی ، اسلام آبادہائیکورٹ کا2رکنی ڈویژن بینچ سماعت کرے گا، جس میں جسٹس عامرفاروق اورجسٹس محسن اخترکیانی بینچ میں شامل ہیں۔

نیب کی جانب سے ضمانت منسوخی کی درخواست اعتراض دورکرنےکےبعددوبارہ دائرکی گئی ، رجسٹرارآفس نے نیب کی درخواست پرتکنیکی نوعیت کے اعتراضات عائد کئے تھے۔

گزشتہ روز نیب نے نواز شریف کی ایون فیلڈ ریفرنس میں ضمانت منسوخی کی درخواست دائر کی تھی، درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا کہ نواز شریف کو لیگی رہنماؤں کی جانے سے پاکستان نہ آنے کا مشورہ دیا گیا، جن رہنماؤں نے نواز شریف کو نہ آنے کا مشورہ دیا ان کے خلاف کاروائی کی جائے۔

نیب نے کہا تھا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے ایون فیلڈ ریفرنس میں نواز شریف کی سزا معطل کی تھی اور سپریم کورٹ نے بھی نواز شریف کی سزا معطلی کا ہائیکورٹ والا فیصلہ ہی برقرار رکھا تھا۔

درخواست میں کہا گیا نواز شریف نے سزا معطلی اور ضمانت کی رعایت کا غلط استعمال کیا، بیرون ملک جانے چلے جانے کے بعد نواز شریف اس رعایت کے مستحق نہیں رہے۔ نیب نے درخواست کی تھی کہ نواز شریف کی ایون فیلڈ ریفرنس میں سزا معطلی اور ضمانت ختم کی جائے۔

نیب نے درخواست میں استدعا کی کہ نواز شریف مفرور ہیں، نوازشریف کی ضمانت منسوخ کرکےگرفتاری کی اجازت دی جائے۔

خیال رہے 19 ستمبر 2019 کو اسلام آباد ہائی کورٹ کےدو رکنی بینچ جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس میاں گل حسن اورنگ زیب نے مختصر فیصلے میں نوازشریف، مریم اور صفدر کی سزائیں معطل کرکے تینوں کی رہائی کا حکم دیا تھا۔

واضح رہے 6 جولائی کو احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے ایون فیلڈ ریفرنس کا فیصلہ سناتے ہوئے نواز شریف کو دس مریم نواز کو سات اور کیپٹن ر صفدر کو ایک سال کی سزا سنائی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں