The news is by your side.

Advertisement

پانی چوری کرنے کے لیے کراچی میں غیر قانونی روڈ کٹنگ کا انکشاف

کراچی: شہر قائد میں پانی چوری کرنے کے لیے غیر قانونی روڈ کٹنگ کا انکشاف ہوا ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق کراچی میں پانی کی لائن مرمت کرنے کے بہانے روڈ کٹنگ کر کے پانی کی چوری کی جا رہی ہے۔

ذرایع کا کہنا ہے کہ ضلع وسطی میں بڑا بورڈ سے لے کر لسبیلہ تک پانی کی لائن مرمت کرنے کے بہانے روڈ کٹنگ کی گئی ہے، جب کہ روڈ کٹنگ کے ذریعے غیر قانونی طور پر اضافی پانی کی لائنیں لگائی جا رہی ہیں۔

ذرایع نے بتایا کہ پانی کی لائن مرمت کرنے کے بہانے روڈ کٹنگ کرنے کے لیے اجازت بھی نہیں لی گئی ہے، کے ایم سی کے قانون کے مطابق 25 سال تک روڈ کٹنگ نہیں کی جا سکتی۔

پانی چور مافیا نے کچھ عرصہ قبل ہی بننے والی روڈ کو پھر سے کھود ڈالا ہے، جہاں پانی کی لائن چوری کے لیے ڈالی گئی ہے وہاں میگا منصوبہ گرین لائن پراجیکٹ بھی ہے۔

کراچی، واٹر بورڈ کی مین لائنوں پر دھات کی پلیٹیں لگا کر پانی چوری کا انکشاف

یاد رہے کہ ماضی میں نارتھ کراچی میں واٹر بورڈ کی مین لائنوں سے پانی چوری کے لیے ان پر دھات کی پلیٹیں لگائی گئی تھیں، چور مافیا اس ترکیب سے علاقے کا پانی بند کر کے کمرشل صارفین کو فروخت کر رہا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں