The news is by your side.

Advertisement

دلہے کے رقص پر امام کا نکاح پڑھانے سے انکار

باراتیوں کے ساتھ دلہے کے رقص اور مسلسل کئی گھنٹوں تک گانے بجانے پر امام مسجد نے سخت ‏ناراضی کا اظہار کرتے ہوئے نکاح پڑھانے سے صاف انکار کر دیا۔

یہ واقعہ بھارتی دارالحکومت دہلی میں 21 مارچ کو پیش آیا جہاں سہرا سجائے دلہا بڑی دھوم دھام ‏سے بارات لے کر لڑکی والوں کے گھر پہنچا تو ڈھول کی تھاپ پر باراتیوں نے خوب رقص کیا۔

بارات کے ساتھ آئے ڈی جے نے خوب اونچی آواز میں گانے بجائے جس پر دلہے اور باراتیوں نے ‏ڈانس کیا۔ یہ سلسلہ کئی گھنٹے تک جاری رہا اور نکاح خواں کو دیا گیا وقت گزر گیا۔

شادی کے ہنگامے اور رقص کو دیکھتے ہوئے نکاح خواں نے یہ کہہ کر نکاح پڑھانے سے صاف انکار ‏کردیا کہ باراتیوں کو ظہر سے گانے بجانے سے منع کیا لیکن انہوں نے کوئی بات نہیں سنی اور ‏عصر کے بعد تک گانے بجاتے رہے۔

اس واقعے کی ویڈیو بھی سامنے آئی جس میں عیدگاہ مسجد کے پیش امام سفیان نکاح پڑھانے ‏سے انکار کی وجہ بتا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کئی گھنٹے تک محلے میں ڈھول تاشے سے ‏ہنگامہ برپا کیے رکھا اور منع کرنے کے باوجود ان کی بات نہیں مانی گئی اس لیے وہ نکاح نہیں ‏پڑھا رہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں