رواں سال پاکستان کے لیے اقتصادی طور پر مشکل ہوگا: آئی ایم ایف -
The news is by your side.

Advertisement

رواں سال پاکستان کے لیے اقتصادی طور پر مشکل ہوگا: آئی ایم ایف

واشنگٹن: عالمی مالیاتی ادارے نے بھی سیاسی اتفاق رائے معیشت کے لیے ضروری قرار دے دیا۔ آئی ایم ایف کا کہنا ہے کہ بیرونی کھاتوں پر دباؤ کے باعث رواں سال پاکستان کے لیے مشکل ہوگا۔

انٹرنیشل مانیٹری فنڈ کی پاکستان میں نمائندہ ٹریزا ڈیبن کا کہنا ہے کہ پاکستان میں سیاسی اتفاق رائے ضروری ہے۔ معاشی اصلاحات کے لیے سیاسی استحکام ضروری ہوتا ہے۔

پاک امریکا تعلقات کے بارے میں بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف پر امریکا کا کوئی دباؤ نہیں۔ آئی ایم ایف فنڈ میں امریکا کا حصہ صرف 17 فیصد ہے۔

آئی ایم ایف نے خبردار کیا ہے کہ بیرونی کھاتوں پر دباؤ، قرضوں کی ادائیگی اور خام تیل قیمت میں اضافے کے باعث رواں سال پاکستان کے لیے مشکل ہوگا۔ زرمبادلہ ذخائر میں کمی تشویشناک ہے۔

ادارے کے مطابق روپے کی قدر میں کمی معشیت کے لیے بہتر ہے۔ آئی ایم ایف نے شرح سود میں مزید اضافے کی پیش گوئی بھی کی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں