The news is by your side.

Advertisement

25 ہزار کا پرائز بانڈز رکھنے والوں کے لئے بڑی خبر

کراچی: وزارت خزانہ نے پچیس ہزار مالیت کے نئے پرائز بانڈز کی فروخت سے متعلق بڑا فیصلہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق فنانس ڈویژن کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق پچیس ہزار کے نئے پرائز بانڈز کی فروخت پر فوری پابندی عائد کردی گئی ہے، بانڈز کو اسپیشل سیونگز یا ڈیفنس سیونگ سرٹیفکیٹس میں تبدیل کرایا جاسکتا ہے۔

اعلامیہ کے مطابق اکتیس مئی دو ہزار اکیس کے بعد پچیس ہزار مالیت کا پرائز بانڈ ناقابل استعمال تصور ہوگا، صارفین اسٹیٹ بینک، نیشنل بینک سمیت پانچ بینکوں کی سولہ برانچوں سے بانڈز کو تبدیل کراسکتے ہیں، بانڈ کیش کرانے والا شخص ذاتی حیثیت میں اپنے اکاؤنٹ میں رقم منتقلی کراسکےگا۔فنانس ڈویژن کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق انعامی رقم کیلئے پرائز بانڈ شناختی کارڈ کی کاپی کے ساتھ اسٹیٹ بینک میں جمع کراناہوگا، انعامی رقم میں پہلے دوانعام 3،3کروڑ روپےکے رکھےگئےہیں، دوسرے نمبر پر ایک کروڑکےپانچ انعام رکھےگئےہیں جبکہ تیسرےنمبرپرتین لاکھ کے سات سو انعامات رکھےگئےہیں۔

یہ بھی پڑھیں: 25  ہزار کے پرائز بانڈز سے متعلق حکومت کا اہم فیصلہ

واضح رہے کہ چالیس ہزار کے بعد پچیس ہزار کے انعامی بانڈز ختم کرنے کا فیصلہ فناشنل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) کی شرائط میں شامل تھا۔

یاد رہے کہ اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے 40 ہزار والے بانڈز رواں برس مارچ میں ختم کر دیے تھے، چالیس ہزار مالیت والے پرائز بانڈ کی مالی حیثیت یکم اپریل سے ختم ہو گئی ہے۔ یہ اقدام کالے دھن سے بانڈز کی خریداری کرنے والوں کے خلاف گھیرا تنگ کرنے اور معیشت کو دستاویزی بنانے کی خاطر کیا گیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں