The news is by your side.

Advertisement

وفاقی حکومت کا کرونا کی تیزی سے بگڑتی صورتحال پر اہم فیصلہ

ملک میں کرونا وائرس کی بگڑتی صورتحال کے پیش نظر وفاقی حکومت نے ماس ویکسی نیشن سینٹر فوری بحال کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

اومیکرون کے تیزی سے وار نے ایک مرتبہ پھر ملک کو کرونا پابندیوں کی طرف دھکیلنا شروع کردیا ہے، کرونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کو کنٹرول کرنے کےلیے وفاقی حکومت نے اہم فیصلہ لےلیا ہے۔

وزارت قومی صحت نے فوری طور پر دارالحکومت ماس ویکسینیشن سینٹر بحال کرنے کے احکامات جاری کرتے ہوئے موبائل ویکسینیشن سینٹرز کی بحالی کی ہدایت بھی جاری کی ہیں۔

قومی وزارت صحت کا کہنا ہے کہ ایف نائن پارک کے ماس ویکسینیشن سینٹر نے ازسر نو کام کا آغاز کردیا ہے۔

وفاقی حکام نے مراسلہ جاری کیا ہے کہ ماس، موبائل ویکسی نیشن سینٹرز کیلئے کنٹریکٹ پر عملہ اور 136ویکسی نیٹرز بھرتی کیا جائے۔

خیال رہے کہ ایف نائن ماس ویکسی نیشن سینٹر بندش کے احکامات 21 دسمبر کو جاری ہوئے تھے اور ایف نائن ماس ویکسی نیشن سینٹر گندھارا آرٹ سینٹر کے قیام کا فیصلہ ہوا تھا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ سی ڈی اے نے ماس ویکی نیشن سینٹر خالی کرنے کےلیے این ڈی ایم اے کو مراسلہ لکھا تھا، جسے مئی 2021 میں قائم کیا گیا تھا۔

ایف نائن سینٹر میں یومیہ 20 ہزار افراد کی ویکسی نیشن کی گنجائش ہے جب کہ اسی سینٹر میں یومیہ 55 ہزار افراد تک کی ویکسی نیشن کی جاچکی ہے۔

واضح رہے کہ کرونا وائرس کے کیسز کی سب سے زیادہ شرح 35.30 فیصد کراچی میں ریکارڈ کی گئی ہے جب کہ حیدرآباد میں کرونا کیسز کی شرح 5.12 فیصد، گلگت میں 4.08 فیصد، مظفرآباد میں 11.90 اور میرپور میں 2.17 فیصد رہی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں