site
stats
پاکستان

توہین عدالت کیس:الیکشن کمیشن میں عمران خان نےوکیل تبدیل کرلیا

اسلام آباد: الیکشن کمیشن میں چیئرمین تحریک انصاف کے خلاف توہین عدالت کیس میں عمران خان نےاپنا وکیل تبدیل کرلیا۔اب عمران خان کی جانب سےبابراعوان پیش ہوں گے۔

تفصیلات کےمطابق الیکشن کمیشن میں عمران خان کے خلاف توہین عدالت کیس کی سماعت ہوئی جس میں پی ٹی آئی کےوکیل نے کہا کہ عمران خان کی جانب سے نیا جواب تیار کرلیا گیا ہےجو نئے وکیل بابراعوان الیکشن کمیشن میں جمع کرائیں گے۔

چیف الیکشن کمشنر نےاستفسار کیا کہ ہم نے عمران خان کو آئندہ سماعت پر جواب جمع کرانے کا حکم دیا تھا جبکہ رکن الیکشن کمیشن جسٹس ریٹائرڈ ارشاد قیصر نےاستفسار کیا کہ بابر اعوان کا وکالت نامہ کہاں ہے جس پر وکیل پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ بابر اعوان خود اپنا وکالت نامہ پیش کریں گے۔

چیف الیکشن کمشنر کا کہنا تھا کہ ہم کل اس پر سماعت کرکے فیصلہ کریں گےجس پر پی ٹی آئی کے وکیل کی جانب سے سماعت آئندہ ہفتے مقرر کرنے کی استدعا کی گئی۔

پی ٹی آئی کے وکیل نے کہا کہ عمران خان چترال میں ہیں اس لیے وقت دیا جائے۔ چیف الیکشن کمشنر نے استفسار کیا کہ عمران خان کبھی چترال میں ہوتے ہیں کبھی نتھیا گلی میں،جس پر وکیل پی ٹی آئی نے کہا کہ عمران خان قومی لیڈر ہیں۔

چیف الیکشن کمشنر نے استفسار کیا کہ تو کیا ہم قومی ادارہ نہیں،ہمیں عمران خان کے جواب کی ضرورت نہیں اب صرف حکم سنائیں گے۔


اسحاق ڈارنے شوکت خانم اسپتال پرحملہ کرکے گھٹیا حرکت کی، عمران خان


پی ٹی آئی کے وکیل نے الیکشن کمیشن سے سماعت 10 جولائی تک ملتوی کرنے کی استدعا جس پر چیف الیکشن کمشنر کا کہنا تھا کہ آئندہ سماعت پر فیصلہ سنایا جائے گا تاہم پی ٹی آئی وکیل کی مسلسل استدعا پرسماعت 10 جولائی تک ملتوی کردی گئی۔

الیکشن کمیشن میں سماعت کےبعد پی ٹی آئی کے وکیل شاہد گوندل نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف کےبھگوڑےکی درخواست پر سماعت ہوئی۔

شاہد گوندل کا کہناتھاکہ عمران خان نے اپنا جواب ایک ماہ قبل جمع کرایاتھا،جس میں واضح کہاتھا کہ کوئی توہین عدالت نہیں کی۔

واضح رہےکہ پی ٹی آئی کےوکیل نےکہاکہ 10جولائی کوبابر اعوان اس کیس کی پیروی کریں گے،اگلا لائحہ عمل بھی بابراعوان ہی بتائیں گے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top