site
stats
سندھ

عمران اسماعیل کی پریس کانفرنس پرکراچی اتحاد کے کارکنان کا حملہ

کراچی : تحریک انصاف کے رہنما عمران اسماعیل کی پریس کانفرنس کے درمیان مسلم لیگ (ن) کے کارکنوں نے دھاوا بول دیا،عمران اسماعیل کو دھکے دے روسٹرم پر قبضہ کر لیا

تفصیلات کے مطابق کراچی میں مسلم لیگ ن کے نامزد ڈپٹی میئرامان اللہ آفریدی کی قیادت میں کچھ کارکن پریس کانفرنس کے دوران گھس آئے اور عمران اسماعیل کو دھکا دے کرروسٹرم سے ہٹا کر خود میڈیا سے بات چیت کرنا شروع کردی۔


Imran Ismail's media talk disrupted in Karachi by arynews

اس موقع پر ن لیگ کے نامزدڈپٹی میئرامان اللہ نے کہا کہ گزشتہ رات ن لیگ ،پی پی اور تحریک انصاف سمیت چھ جماعتوں نے کراچی اتحاد کے نام سے ایک اتحاد بنایا تھا جس میں تحریک انصاف کے رہنما نے حلف اٹھایا تھاکہ وہ ضلع کونسل کے الیکشن میں6 جماعتی اتحاد کے فیصلے کے مطابق ووٹ دیں گے لیکن پولنگ کے دوران انہوں نے حلف کی خلاف ورزی کی۔

اس موقع پر پولیس اور رینجرز کی بھاری تعداد نے موقع پر پہنچ کر عمران اسماعیل کو حفاظتی حصار میں لیا اور عمارت کے اندر لے گئے۔

قبل ازیں عمران اسماعیل نے ایم کیوا یم کے نامزد میئر کرا چی وسیم اختر سے ملاقات کی جس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وسیم اختر کو پارٹی رہنما کی حیثیت سے نہیں ملا ،وسیم پرانا دوست تھا اس لئے ملنے گیا۔

انہوں نے کہا کہ کل قائد متحدہ نے جوزبان استعمال کی وہ سب نے سنی ،کراچی کو کچرا کنڈی بنایا گیا آٹھ سال سے صفائی نہیں کی گئی۔

تحریک انصاف کے رہنما عمران اسماعیل نے اس بات کا بھی اعادہ کیا کہ ڈسٹرکٹ کونسل کے منتخب چیئرمین کے ساتھ مل کر چلیں گےچاہے اُن کا تعلق کسی بھی جماعت سے ہی کیوں نہ ہو۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top