بنی گالہ اراضی کیس، عمران خان نے عدالت میں ثبوت دے دیے، فواد چوہدری imran
The news is by your side.

Advertisement

بنی گالہ کیس، عمران خان نے عدالت میں ثبوت دے دیے، فواد چوہدری

اسلام آباد: تحریک انصاف کے ترجمان فواد چوہدری نے کہا ہے کہ عدالت نے بنی گالہ کی منی ٹریل طلب کی تھی جو پیش کر دی گئی، عمران خان کے خلاف عدالتوں میں بنائے جانے والے مقدمات میں کوئی جان نہیں ہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ عمران خان کی منی ٹریل سے متعلق وضاحت دینا ضروری تھی کیونکہ ایک میڈیا گروپ کی کوشش ہے کہ عدالت عمران خان کے خلاف پاناما سے پہلے فیصلہ سُنا دے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کی بنی گالہ میں موجود اراضی کی خریداری کا کیس حنیف عباسی نے عدالت میں دائر کیا تھا، جمائما نے 13 سال پرانی منی ٹریل بھیجی جو ہم نے عدالت میں پیش کردی تو ن لیگ کا مقدمہ ختم ہوگیا۔

فواد چوہدری نے کہا کہ عمران خان کا لندن کا اپارٹمنٹ ایک لاکھ17ہزارپاؤنڈکاخریدا گیا تھا جبکہ حسین نواز کا لندن میں عالی شان فلیٹ (پیلس) آج بھی موجود ہے، عمران خان نے 1971 میں ہوسٹر شائر کے ساتھ کاؤنٹی کرکٹ کھیلی۔

ترجمان تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ سسکس کاؤنٹی والوں نے خود اس بات کی تصدیق کی کہ عمران خان کے ساتھ کم از کم 6 ماہ کا معاہدہ ہوتا تھا، سسکس کاؤنٹی والوں کی جانب سے معاہدے کے عوض 25ہزار پاؤنڈز دیے جاتے ہیں۔

اُن کا کہنا تھا کہ 1977میں عمران خان نےکیری پیکرسیریزکھیلی جس سے ہر سال 25 ہزار ڈالرز ملتے تھے، 80 کی دہائی میں عمران خان کا شمار اوورسیز کھلاڑیوں میں سب سے مہنگے کھلاڑی کے طور پر ہوتا تھا۔

فواد چوہدری نے کہا کہ کاؤنٹی کلب سسکس نے صاف انکار کردیا ہے کہ وہ 20 سال سے زیادہ پرانا ریکارڈ فراہم نہیں کرسکتے، عمران خان کی کاؤنٹی سے وابستگی کی معلومات ویب سائٹس پر موجود ہیں۔

تحریک انصاف کے ترجمان نے کہا کہ ہمیں عدالت کو صرف ایک لاکھ 70 ہزار پاؤنڈ کا حساب دینا ہے جبکہ عمران خان نے کرکٹ کھیل کر 3 لاکھ پاؤنڈز سے زیادہ حاصل کیے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں