The news is by your side.

Advertisement

عمران خان بھی کروڑوں روپے کے اثاثوں کے مالک نکلے

اسلام آباد: دیگرسیاست دانوں کی طرح عمران خان بھی کروڑوں روپے کے اثاثوں کے مالک نکلے اور ان کے پاس 168 ایکڑ زرعی زمین ہے۔

تفصیلات کے مطابق عمران خان کے این اے 131 سے نامزدگی فارم میں ظاہر اثاثوں کی تفصیلات سامنے آگئیں، جس کے مطابق عمران خان نے2017 میں 4کروڑ77لاکھ 6611 آمدن ظاہر کی جبکہ ایک لاکھ3763 انکم ٹیکس ظاہر کیا۔

سال 2016 میں 12 کروڑ 98 لاکھ 3ہزار 878 آمدن ظاہر کی اور ایک لاکھ 59ہزار 609روپے ٹیکس ظاہر کیا جبکہ 2015 میں 35 کروڑ 65 لاکھ 565 آمدن پر 76ہزار244 ٹیکس ادا کیا گیا۔

عمران خان نے دبئی، بھارت سمیت غیر ملکی دورے گوشواروں میں ظاہرکیے، عمران خان کے پاس 168ایکڑ زرعی زمین ہے ، زرعی زمین پر2017 میں 3 لاکھ 19 ہزار 500انکم ٹیکس ، 2016 میں 4 لاکھ 67 ہزار 910 زرعی انکم ٹیکس جبکہ 2015 میں 4 لاکھ77ہزار 975روپے زرعی انکم ٹیکس ادا کیا۔

عمران خان کیخلاف 2014 میں دھرنوں میں درج مقدمات کا بھی گوشواروں میں ذکر ہے، گوشواروں میں عمران خان نے بشریٰ بی بی کا بطور اہلیہ ذکر کیا جبکہ بشریٰ بی بی کے اثاثہ جات کا گوشواروں میں کوئی ذکر نہیں۔

عمران خان نے گوشواروں میں بیٹوں قاسم خان اور سلیمان خان کا بھی ذکر کیا، انھوں نے زمان پارک کا 148مرلے کا گھر وراثت ظاہر کیا، 300 کنال کے بنی گالا میں گھر کی مالیت 11کروڑ 47لاکھ ظاہر کی گئی ہے جبکہ 6 کنال 16 مرلے کی بنی گالا ہی میں دوسری جائیداد 5 کروڑ 50ہزار کی بتائی گئی۔

گوشواروں میں شاہراہ دستور اسلام آباد پر فلیٹ کی قیمت گیارہ کروڑ 97لاکھ ظاہر کی گئی ہے جبکہ میانوالی ، لاہور ، شیخوپورہ، بھکر،میاں چنوں میں بھی وراثتی جائیدادوں کا ذکر کیا ہے، بھکر منکیرہ عمران خان کی زرعی زمین کی مالیت4کروڑ 2لاکھ روپے ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں