The news is by your side.

Advertisement

عمران خان کیخلاف توہین عدالت کیس قابل سماعت ہونے کا تفصیلی فیصلہ جاری

اسلام آباد : الیکشن کمیشن نے عمران خان کیخلاف توہین عدالت کیس کے قابل سماعت ہونے کا تفصیلی فیصلہ جاری کردیا، فیصلے میں کہا گیا کہ عمران خان غیرضروری طور پر کیس کو لمبا کر رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق عمران خان کیخلاف توہین عدالت کیس قابل سماعت ہے یا نہیں، الیکشن کمیشن نے تفصیلی فیصلہ جاری کردیا ہے۔

الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری فیصلے میں کہا گیا کہ توہین عدالت کی کارروائی عمران خان کے توہین آمیز ریمارکس پر شروع کی، عمران خان غیر ضروری طور پر کیس کو لمبا کر رہے ہیں، وکلاء کو تبدیل کرکے اور مختلف طریقوں سے تاریخیں لی گئیں۔

فیصلے میں کہا گیا کہ بابراعوان کو آخرکار وکیل مقرر کیا گیا تو انہوں نے کہاکہ سماعت کا اختیار ہی نہیں۔

تفصیلی فیصلے میں کہا گیا عمران خان کو روپا ایکٹ انیس سو چھہتر کے تحت شوکاز نوٹس جاری کردیا گیا ہے، توہین عدالت آرڈیننس دو ہزار تین اور آئین کے آرٹیکل دو سو چار کا حوالہ بھی دیا گیا ہے۔

الیکشن کمیشن کے فیصلے میں کہا گیا کہ کمیشن کے اختیارات کو آئین کے آرٹیکل دو سوبائیس کے تابع نہیں کیا جا سکتا۔

یاد رہے کہ الیکشن کمیشن نے جنوری میں عمران خان کو کمیشن کے خلاف متنازعہ بیان دینے پر توہین عدالت کا نوٹس جاری کیا تھا۔

بعد ازاں عمران خان نے الیکشن کمیشن کے دائرہ اختیار کو چیلنج کرتے ہوئے کہا تھا کہ کسی فرد کے خلاف توہین عدالت کی درخواست پر سماعت کا اختیار صرف سپریم کورٹ اور ہائیکورٹ کو ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں