The news is by your side.

Advertisement

منی لانڈرنگ کا مجرم کہتا ہے میری واپسی پر جلسے کرو: عمران خان

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کا کہنا ہے کہ منی لانڈرنگ کا مجرم کہتا ہے میری واپسی پر جلسے کرو۔ مغرب میں منی لانڈرنگ کرنے والا لوگوں میں جانے کی جرات تک نہیں کرتا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے اسلام آباد میں کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں کسی بھی کمزور طبقے کو بنیادی حقوق نہیں ملتے۔

عمران خان نے کہا کہ ڈھائی کروڑ بچے اسکول ہی نہیں جاتے، یہ خطرناک صورتحال ہے۔ 45 فیصد پاکستانی بچوں کو غذائی قلت کی وجہ سے بیماری ہے۔ ظلم ہے 45 فیصد بچوں کی اسٹینڈرڈ گروتھ ہی نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ ریاست کی ذمہ داری ہے غریبوں کو بنیادی حقوق دینا، طاقتور کمزور پر ظلم کرتا ہے تو کمزور کے پاس انصاف کے لیے وسائل ہی نہیں۔ مہذب معاشرے میں بے روزگاروں کو خصوصی فنڈز دیے جاتے ہیں۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ قانون کی بالا دستی نہیں ہوتی تو ہمیشہ کمزور کو نقصان اٹھانا پڑتا ہے، معاشرے کی نشوونما قانون کی بالا دستی ہے اور ہر طبقے کے لیے انصاف ہے۔

انہوں نے کہا کہ مدینہ کی فلاحی ریاست میں سب کے حقوق یکساں تھے۔ مدینہ کی فلاحی ریاست میں تمام مذاہب کے لوگوں کو حقوق ملتے تھے۔ زبردستی لوگوں سے مذہب تبدیل کروانے کی اسلام میں اجازت ہی نہیں۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ ریمنڈ ڈیوس نے دن دیہاڑے 2 لوگوں کو گولی مار دی۔ مغربی ممالک میں اس قسم کا واقعہ ہوتا تو اسے جیل میں ڈال دیا جاتا۔ پاکستان کا قانون کمزور تھا اسی لیے ریمنڈ ڈیوس باآسانی فرار ہوگیا۔

انہوں نے کہا کہ ایک مجرم پکڑا گیا اور وہ کہتا ہے میری واپسی پر جلسے کرو، منی لانڈرنگ کرتے ہوئے پکڑا گیا اب کہتے ہیں میرا استقبال کریں۔ مغرب میں منی لانڈرنگ کرنے والا لوگوں میں جانے کی جرات تک نہیں کرتا۔ وہاں ارب پتی کرپشن پر پکڑا گیا تو اس کا سوشل بائیکاٹ کیا گیا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں