The news is by your side.

احدچیمہ وہ طوطا ہےجس میں شہبازشریف کی جان ہے،عمران خان

اسلام آباد : پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کا کہنا ہے کہ احدچیمہ وہ طوطا ہےجس میں شہبازشریف کی جان ہے، چھوٹےڈان شہبازشریف نےاپنانظام بنا رکھا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ نیب احدچیمہ کوپکڑتی ہےتو لاہورمیں پوسٹر لگ جاتے ہیں ، احد چیمہ ہے یا نیلسن مینڈیلا کہ پوسٹر لگ گئےہیں، احدچیمہ وہ طوطا ہےجس میں شہبازشریف کی جان ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ احد چیمہ کی سرابرہی کے بعد ایل ڈی اے میں دیگر شہر شامل کیےگئے، کوئی اورآدمی نہیں ملا جو اربوں کےپراجیکٹ پرکام کر رہا تھا، 4 ارب کا شوکت خانم اسپتال پشاور میں بنا،ایک بیوروکریٹ پر 14ارب کا کیس ہے۔

احد چیمہ ہے یا نیلسن مینڈیلا کہ پوسٹر لگ گئےہیں

چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ سپریم کورٹ نے پاناما کیس میں کہا سارے ادارے کنٹرولڈ ہیں، گاڈمافیاکواس لیےاس کےکنٹرول کےباعث کہاگیاہے، اداروں میں ان کےکام کرنے کے لیے بیورو کریٹ بیٹھےہیں۔

انکا کہنا تھا کہ بیوروکریسی کا گاڈ فادر فواد حسن فواد ہے،آفتاب سلطان کوآئی بی کاچیف لگادیا، قمرزمان چوہدری کوخاص طورپراستعمال کیاگیا، سعیداحمدسےمتعلق اسحاق ڈار نے کہا ان کے لیے منی لانڈرنگ کرتا تھا، ظفرحجازی ابھی بھی ایس ای سی پی میں بیٹھاہواہے، آفتاب سلطان کون لیگ نےجیتنےوالے امیدوار چننے پر لگایا ہوا ہے، ظفرحجازی کےخلاف سپریم کور ٹ نےنوٹس لیا تھا۔

سربراہ تحریک انصاف نے کہا کہ چھوٹے ڈان شہبازشریف نےصوبےمیں اپنانظام بنایا ہوا ہے، احدچیمہ کواربوں روپےکےپلاٹ دیےگئے، زاہد سعید، سبطین فضل امین میٹرو کا سربراہ تھا، ان سب بیوروکریٹس کو احد چیمہ کے لیے بہت تکلیف ہورہی ہے، ذاتی خاندان کی خدمت بیوروکریٹس کا  کام نہیں ہے، کے پی میں بیورکریٹس کوہمیشہ کہا ہے کبھی غلط کام نہیں کرنا، چیف سیکریٹری اعظم خان سے پوچھیں کسی نے ان کوغلط کام کہا۔

احدچیمہ جب بولناشروع کرے گا تو شہباز شریف اور حمزہ شہباز پھنس جائیں گے

عمران خان کا کہنا تھا کہ پنجاب میں ڈی ایم جی رائیونڈ ہے، یہ رائیونڈ سے ہدایت لیتے ہیں، پتہ ہےاحد چیمہ منہ کھولے گا تو ان کی باری آجائےگی، احدچیمہ جب بولنا شروع کرے گا تو شہباز شریف اور حمزہ شہباز پھنس جائیں گے، ساتھ میں پیراگون کیس میں خواجہ سعدرفیق بھی آجائیں گے۔

انھوں نے کہا کہ شہبازشریف نے9سال میں 9ہزار ارب روپےخرچ کیےہیں، اتنےپیسے ہیں موٹر پرکراچی سےلاہور تک بچھا دیں تو بھی بچ جائیں۔ ہمارے کسی ادارے نے شہباز شریف کو نہیں پکڑا تھا، مریم نواز کو نہیں پتہ تھا پانچ سال بعد پاناماکا انکشاف ہو جائے گا۔

مریم نواز کو نہیں پتہ تھا پانچ سال بعد پاناماکا انکشاف ہو جائے گا

پی ٹی آئی چیئرمین کا کہنا تھا کہ چین کی ایس ای سی پی نے کمپنی کے یابید کا منافع 78فیصددیکھا، چین کی ایس ای سی پی نے پاکستان کی ایس ای سی پی کو خط لکھا، پاکستان کی ایس ای سی پی خط پر چپ ہو کر بیٹھ گئی، تحقیقات میں پتہ چلاجونیئرڈان کاخاندان ساری کرپشن دیکھتاہے، تحقیقات کےمطابق شریف خاندان آف شورکمپنی سے ادائیگی کرتے ہیں، ایک فرنٹ انجینئرنگ کمپنی سے چین کی کمپنی کوادائیگی کی گئی۔

انھوں نے مزید کہا کہ بڑے بڑے میگا پراجیکٹ پیسہ بنانےکےلیےبنائےجاتےہیں بنیادی سہولتوں پرخرچ ہونےوالاپیسہ بڑےپراجیکٹ پرلگایاگیا، لاہورکی میٹرو کا سالانہ خسارہ ڈھائی ارب روپے کا ہے، سارےمنصوبے مال بنانے کے لیے بنائےگئے، 200 ارب کی اورنج ٹرین کی تفصیلات دکھانےپرکہاخفیہ ہے،اب ہم نیب سےمطالبہ کریں گےلاہور،ملتان اور اسلام آباد کے میٹرو منصوبے کھولیں۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ فرنٹ مین فیصل سبحان غائب کردیاگیاہے، ایسےکسی جمہوریت میں کسی کوغائب کردیاجاتاہے، ایسانہ ہوعابد باکسر جیسے کسی بندے سے فیصل سبحان کو مروا دیا جائے، فیصل سبحان غائب ہوگیا ہے،یہ لمحہ فکریہ ہے، ان کے بیوروکریٹس مافیا کا حصہ بن گئے ہیں، فیصل سبحان سے پتہ چلا یہ بڑا پراجیکٹ بنا کر پیسہ باہر بھیج دیا جاتا ہے۔

چھوٹا ڈان ڈرا ہوا ہے،جب احد چیمہ منہ کھولے گا یہ پھنس جائیں گے

انھوں نے کہا کہ چھوٹا ڈان ڈرا ہوا ہے،جب احد چیمہ منہ کھولے گا یہ پھنس جائیں گے، ہم چاہتےہیں چین میں کی گئی ادائیگیوں کی تحقیقا ت کی جائیں، حکمرانوں نے ادارے کمزور کرکے ان میں اپنےلوگ بٹھائے، چار میئر فیئر فیلڈ سامنےآئےتوپتہ چلا300ارب ملک سےباہر لے گئے۔

چیئرمین پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ سول سروس کےنذرشاہ نےایک ارب 18کروڑدرخت لگائے، کے پی میں تعلیم کانظام ٹھیک کرنےوالےبھی بیوروکریٹ ہیں،نیب کو مبارکباد دیتا ہوں،  پوری قوم نیب اورسپریم کورٹ کےساتھ ہے۔

ردعمل دکھانے کے لیے اب ہم سڑکوں پرنکلیں گے

عمران خان نے کہا کہ ردعمل دکھانے کے لیے اب ہم سڑکوں پرنکلیں گے، قوم آگے بڑھ چکی ہے،اب لوگ سب سمجھ گئے ہیں ، لوگ سمجھتے ہیں کرپشن سے ان کاپیسہ چھینا جارہا ہے، اب ہم جونیئر ڈان کی چیزیں سامنے لے کرآئیں گے۔

انکا کہنا تھا کہ میں کوئی گورنمنٹ سرونٹ نہیں تھا،سپریم کورٹ میں 64دستاویزپیش کیے، میں نےتوکوئی مظاہرہ نہیں کیا،بینرنہیں لگائے،شورنہیں مچایا، شہبازشریف احدچیمہ کو بچانے کے لیے بیوروکریٹس کو آگے کر رہےہیں، حکمرانوں نے300ارب کاجواب دینا ہے کوئی دستاویزنہیں دی۔

سربراہ تحریک انصاف نے کہا اب قوم کیوں نکالا اور شہبازشریف کے ڈرامے نہیں سنے گی، شریف خاندان نے شروع سے پولیس تباہ کی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں