The news is by your side.

Advertisement

بھارت میں آکسیجن کی قلت: کرونا مریضوں کے اہلخانہ کا آکسیجن سلینڈر کی گاڑی پر دھاوا

نئی دہلی : ریاست اتر پردیش کے ولبھ بھائی پٹیل اسپتال میں تیمار داروں نے آکسیجن کی قلت کا سن کر آکسیجن سلینڈر لانے والی گاڑی پر دھاوا بول دیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق بھارت میں کرونا کی دوسری لہر نے قہر ڈھا دیا ہے جہاں روزانہ ہزاروں کی تعداد لوگ ہلاک اور لاکھوں کی تعداد میں متاثر ہورہے ہیں۔

آکسیجن کی قلت بھارت میں کرونا مریضوں کی ہلاکت کا سب سے بڑا سبب بن رہی ہے۔

بھارتی ریاست اتر پردیش کے شہر میرٹھ کے سردار ولبھ بھائی پٹیل میڈیکل کالج میں بھی آکسجین کی قلت نے مریضوں کے تیمارداروں میں کھلبی مچائی ہوئی ہے۔

اسپتال میں موجود مریضوں کے تیمارداروں نے جیسے ہی سنا کہ آکسیجن سلینڈر سے بھری گاڑی اسپتال پہنچی ہے تو انہوں نے گاڑی پر دھاوا بول کر خود ہی سلینڈر اٹھانے شروع کردئیے، اس دوران تیمارداروں میں ہاتھا پائی بھی ہوئی۔

واقعے کی ویڈیو وائرل تو ہوئی اسپتال کی انتظامیہ کو ہوش آیا اور چیف میڈیکل آفیسر نے آکیسجن کی قلت کی خبر کو جھوٹی افواہ قرار دیا۔

انہوں نے کہا کہ کرونا کے مریضوں کو شہر میں آکسیجن کی کوئی کمی نہیں، جن مریضوں کو آکسیجن کی ضرورت ہوگی صرف انہیں ہی آکیسجن فراہم کی جائے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں