امریکی ویزے کے طلبگاروں کے سوشل میڈیا کی جانچ کا فیصلہ -
The news is by your side.

Advertisement

امریکی ویزے کے طلبگاروں کے سوشل میڈیا کی جانچ کا فیصلہ

واشنگٹن: امریکی وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ وہ امریکی ویزے کے طلبگار چند ’مخصوص‘ غیر ملکیوں کے سماجی رابطوں کی ویب سائٹس، اور ان کے رابطہ میں رہنے والے ای میل ایڈریس اور فون نمبرز کی جانچ کریں گے۔

محکمہ کے مطابق یہ قدم ٹرمپ کی ویزے سے متعلق نئی انتظامی پالیسی کے تحت اٹھایا جا رہا ہے۔ اس اقدام کے بعد وہ امریکی ویزے کے خواہش مند چند مخصوص مسافروں کی سوشل میڈیا کی جانچ کریں گے۔

امریکی محکمہ داخلہ کے فیڈرل رجسٹر کی جانب سے شائع کردہ نوٹس میں اس اقدام پر عوامی رائے طلب کی گئی، تاہم نوٹس میں کہا گیا کہ عوامی رائے سے قطع نظر وہ جلد عارضی طور پر اس کی اجازت چاہتے ہیں۔

نوٹس کے مطابق اس قانون کا طلاق ان افراد پر ہوگا جن کا نام ویزے کے حصول کے لیے پہلے ہی اضافی اسکروٹنی کی فہرست میں درج ہوگا۔

ان میں سے زیادہ تر وہ افراد ہوں گے جو اس سے قبل دہشت گردوں کے زیر قبصہ علاقوں جیسے شام یا عراق کا سفر کر چکے ہوں گے۔

مزید پڑھیں: امریکی شہریوں کی بغیر ویزا یورپ سفر کی سہولت ختم

محکمہ کا کہنا ہے کہ یہ قانون امریکا آنے کے خواہش مند تمام افراد کو متاثر نہیں کرے گا۔ یہ قانون امریکی ویزے کے طلبگار صرف 0.5 فیصد افراد کے لیے ہوگا اور اندازاً 65 ہزار افراد اس کی زد میں آئیں گے۔

نوٹس میں کہا گیا ہے کہ ان افراد کو گزشتہ 5 سالوں کے دوران استعمال کیے جانے والے سوشل میڈیا کے ایڈریس اور وہ تمام فون نمبرز اور ای میل ایڈریس ظاہر کرنا ہوں گےجن سے وہ اس عرصہ کے دوران رابطے میں رہے۔

نوٹس کے مطابق ان افراد کے سوشل میڈیا سائٹس کے پاس ورڈز نہیں طلب کیے جائیں گے اور نہ ہی کوئی ایسا قدم اٹھایا جائے گا جس سے ان کی ذاتیات پر زک پڑتی ہو۔

یاد رہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے اقتدار سنبھالتے ہی 7 مسلم ممالک کے شہریوں پر امریکا میں داخلے پر پابندی لگائی تھی جو عدالت کے حکم کے بعد تاحال معطل ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں