سانحہ گڈانی: تحقیقاتی رپورٹ مکمل، وزیراعظم کو پیش -
The news is by your side.

Advertisement

سانحہ گڈانی: تحقیقاتی رپورٹ مکمل، وزیراعظم کو پیش

حب: سانحہ گڈانی کی تحقیقاتی کمیٹی نے اپنی رپورٹ مکمل کرکے وزیراعظم کو پیش کردی، رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مزدوروں کے لیے حفاظتی اقدامات نہ ہونے کے برابر تھے، مزدوروں سے صرف کام لیا جاتا تھا ان کی حفاظت کے لیے کچھ نہ کیاگیا،کمیٹی نے متاثرین کے لیے مالی معاونت اور ری سائیکلنگ بورڈ تشکیل دینے کی سفارش بھی کی۔


New revelations flourish in Gadani incident by arynews

نمائندہ اے آر وائی نیوز لئیق الرحمان کے مطابق وفاقی وزیر دفاعی پیدوار رانا تنویر کی زیر صدارت سانحہ گڈانی کی تحقیقات کے لیے کمیٹی قائم کی گئی تھی جس نے اپنی تحقیقات مکمل کرلی ہیں اور ذمہ دارا ان افراد کو قرار دیا ہے جو جہاز پر حفاظتی اقدامات کرنے کے لیے متعین تھے جو اپنے کام مکمل کرنے کے بعد کلیئرنس دیتے کہ اس جہاز کی کٹنگ کب شروع کی جائے لیکن انہوں نے اپنا کام پورا نہیں کیا۔

gadani-post-1
رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مزدوروں سے صرف کام لیا جاتا تھا اور اس بات کو بالکل نظر انداز کردیا گیا تھا کہ ان کے لیے حفاظتی اقدامات بھی کیے جائیں۔
رپورٹ کے مطابق مستقبل میں ایسے واقعات کی روک تھام اور مزدوروں کی جان کی حفاظت یقینی بنانے کے لیے کمیٹی نے سفارش کی ہے کہ چیف سیکریٹری بلوچستان کی سربراہی میں شپ ری سائیکلنگ بورڈ گڈانی تشکیل دیا جائے جس کی سفارشات پر عمل درآمد یقینی بنایا جائے۔

gadani-post-2
رپورٹ میں تحقیقاتی کمیٹی نے عملی اقدامات پر زور دیا اور حفاظتی اقدامات کے لیے حکومت اور جہاز مالکان کی ذمہ داریاں تجویز کیں۔

دفاعی پیداوار کے وزیر کے ترجمان نے بتایا کہ رپورٹ وزیراعظم آفس میں جمع کرادی گئی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں