The news is by your side.

مودی حکومت نے ایک اور مدرسہ شہید کر دیا

آسام: مودی حکومت نے ریاست آسام میں ایک اور مدرسہ شہید کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق مودی کے بھارت میں مذہبی آزادی جرم کے مترادف ہو گئی ہے، بھارتی فاشسٹ حکومت کے ہاتھوں ریاست آسام میں ایک اور مدرسہ شہید ہو گیا۔

ایک ماہ کے عرصے میں 4 مدارس منہدم کیے جا چکے ہیں، آسام کا مدرسہ بے بنیاد الزام لگا کر شہید کیا گیا، بھارتی میڈیا کے مطابق پولیس کا کہنا ہے کہ مدرسے کا تعمیراتی ڈھانچا کمزور تھا، اور رہائش کے قابل نہیں تھا۔

آسام میں مرکز المعارف قرآنیہ نامی مدرسے کو شہید کیا گیا، بھارتی ریاست میں بھارتیہ جنتا پارٹی کی ریاستی حکومت کا مدارس کے خلاف کریک ڈاؤن کا سلسلہ جاری ہے، جہاں ایک ماہ کے عرصے میں چار مدارس گرائے جا چکے ہیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ایک مقامی پولیس افسر نے مدرسہ شہید کرنے کی مضحکہ خیز وجہ بتائی، کہا کہ مدرسے کا تعمیراتی ڈھانچا کمزور تھا اور رہائش کے قابل نہیں تھا، اس لیے مسمار کرنا پڑا۔

گزشتہ ہفتے آسام حکومت نے مساجد اور اسلامی مدارس سے متعلق ایک نیا حکم نامہ بھی جاری کیا تھا، جس کے تحت غیر مقامی آئمہ اور مدارس کے اساتذہ کی ایک حکومتی ویب سائٹ پر رجسٹریشن لازمی قرار دی گئی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں