The news is by your side.

Advertisement

بھارت:‌ لوک سبھا کے خونی انتخابات، خاتون الیکشن افسر ڈیوٹی پر جاتے ہوئے قتل

نئی دہلی: بھارت میں ہونے والے لوک سبھا کے انتخابات کا دوسرا مرحلہ بھی خونی ثابت ہوا، بھارتی ریاست اڑیسہ میں پولنگ کے دوران نامعلوم افراد نے خاتون الیکشن افسر کو فائرنگ کر کے قتل کردیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق لوک سبھاکے انتخابات کے دوسرے مرحلے میں بدھ کے روز دیگر ریاستوں کی طرح اڑیسہ میں بھی الیکشن کا انعقاد کیا گیا۔ اڑیسہ میں الیکشن کے روز دو پرتشدد واقعات پیش آئے جن میں سے ایک میں نامعلوم افراد نے پولنک بوتھ جانے والی خاتون پرازئیڈنگ افسر کو گولی مار کر قتل کردیا جبکہ دوسرے واقعے میں نامعلوم افراد نے بیلٹ پیپر لے جانے والی الیکشن کمیشن کی گاڑی کو نذ آتش کردیا۔

مزید پڑھیں: بھارتی انتخابات کا دوسرا مرحلہ، مقبوضہ کشمیر میں مکمل ہڑتال

پولیس حکام کے مطابق دونوں واقعات اڑیسہ کے علاقے کندھمال کے ضلع میں پیش آئے، ابتدائی تحقیقات میں یہ بات سامنے آئی کہ انتخابات کا بائیکاٹ کرنے والی جماعت ماؤوادیوں کے کارکنان دونوں واقعات میں ملوث ہیں۔ ڈی جی پی بی کے شرما نے بتایا کہ سنیکتا دگل کو اُس وقت گولی ماری گئی جب وہ بلاند پاڑا گاؤں کے پاس واقع جنگل سے گزر رہی تھیں تو انہیں سڑک کے درمیان میں مشکوک چیز نظر آئی جس کو دیکھنے کے لیے وہ گاڑی سے نیچے اتریں تو نامعلوم افراد نے اُن پر گولیاں برسا دیں۔

پولیس افسر  کا کہنا تھا کہ گاڑی میں موجود دیگر چار پرازئیڈنگ افسر واقعے میں بالکل محفوظ رہے جن سے تحقیقات جاری ہیں، دوسرا واقعہ فرنگیا پولیس تھانے کی حدود میں پیش آیا جہاں ماؤوادیوں نے بیلٹ پیپر لے جانے والی گاڑی کو روک کر آگ لگا دی۔

پولیس حکام کے مطابق چند روز قبل ماؤوادیوں نے ضلع بھر میں پوسٹر اور بینر لگاکر لوگوں سے انتخاب کا بائیکاٹ کرنے کو کہا تھا۔ کندھمال ضلع میں ماؤوادیوں کی موجودگی کو دیکھتے ہوئے الیکشن کمیشن نے یہاں کے سات انتخابی حلقوں میں ووٹنگ کا وقت صبح 7 بجے سے شام 4 بجے تک رکھا۔

یہ بھی پڑھیں: بھارتی انتخابات: پرتشدد واقعات میں 3 افراد ہلاک، دھماکا خیز مواد بھی برآمد

یاد رہے کہ بھارت میں لوک سبھا کے انتخابات کے لیے پولنگ کے دوسرے مرحلے  کا انعقاد ہوا، ملک بھر کی 13 ریاستوں کی 97 نشستوں پر عوام اپنے ووٹ کا حق استعمال کررہے ہیں۔ انتخابات میں 90 کروڑ ووٹر حق رائے دہی استعمال کرنا تھا، یہ تعداد امریکا اور یورپی یونین کی مجموعی آبادی سے بھی زیادہ ہے۔

خیال رہے کہ بھارت میں لوک سبھا کی 543 نشستوں کے لیے مرحلہ وار انتخابات کا انعقاد کیا جارہا ہے، اب تک ایک مرحلہ ہوا جس میں دورانِ ووٹنگ پرتشدد واقعات میں 4 افراد ہلاک جبکہ متعدد زخمی ہوئے۔

 بھارت میں لوک سبھا یعنی ایوان زیریں کے 17 ویں انتخابات کا پہلا مرحلہ 11 اپریل کو ہوا، جس کے تحت 20 ریاستوں کی 91 نشستوں پر ووٹنگ کا انعقاد کیا گیا، مجموعی طور پر 14 کروڑ 20 لاکھ افراد نے اپنا حق رائے دہی استعمال کیا۔

یہ بھی پڑھیں: بھارت میں انتخابات کے دوسرے مرحلے میں ووٹنگ

بھارتی الیکشن کے پہلے مرحلے کے دوران مقبوضہ کشمیر سمیت مختلف ریاستوں میں پرتشدد واقعات پیش آئے جس میں چار افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے، آندھرا پردیشن میں ہونے والی سیاسی تلخ کلامی نے اس قدر شدت اختیار کی کہ 3 افراد کی جانیں گئیں جبکہ مقبوضہ کشمیر کے علاقہ بارہ مولا میں بھارتی فوج نے فائرنگ کر کے 13 سالہ بچے کو شہید کیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں