The news is by your side.

Advertisement

بھارت کی جانب سے سرحدوں پر لیزردیواریں نصب کرنے کا فیصلہ

سیالکوٹ: بھارت نےایک درجن سے زائد لیزر دیواریں پاکستان کی سرحد کے ساتھ آپریشنل کردیں، لیزردیواروں کے ذریعے سیکورٹی کو موثر بنانے اور بھارتی سرحد میں مداخلت کو روکا جاسکے گا.

بی ایس ایف کی جانب سے ٹائمز آف انڈیا کو بتایا گیا ہے کہ آٹھ لیزر دیواریں لگائی گئی ہیں جن میں سے تین بنجاب بارڈر کے ساتھ جب کہ چار آئندہ کچھ دنوں میں لگائی جائیں گی ان لیزردیواروں کو بین الاقوامی سرحد سمیت حساس علاقوں کی نگرانی کو موثر بنانا اور ساتھ ہی بیرونی مداخلت کو روکنا ہے۔

لیزر دیواریں جموں کشمیر، پنجاب، گجرات، راجستھان میں لگائیں جائے گیں جس کی نگرانی بھارتی بارڈر فورس بی ایس ایف کرے گی۔

ان لیزر دیواروں کو لگانے کا فیصلہ بی ایس ایف کی جانب سے دو سال پہلے ہی کرلیا گیا تھا ان علاقوں میں سرحد کے خطرے کو نظر میں رکھتے ہوئے۔

پٹھان کوٹ حملے کے بعد یہ شبہ تھا کہ دہشت گردوں نے پنجاب میں بمیال علاقے سے سرحد کی خلاف ورزی کی، جس کے بعد مرکزی وزارت داخلہ اور بی ایس ایف نے سرحد کے ساتھ ان دیواروں کو نصب کرنے کا فیصلہ کیا.

مزید 45 لیزر دیواروں کو پاک بھارت سرحدی علاقوں میں نصب کیا جائےگا.جس سے حساس علاقوں کی نگرانی سمیت بین الاقوامی بارڈرز پر مداخلت کو روکا جاسکے گا.

تکنیکی ماہرین کی ٹیم کے ساتھ بی ایس ایف سرحدوں پر سیکورٹی کے نظام کو موثر بنانے کے لئے کام کرے گی تاکہ دہشتگردی کی کاروائیوں کو روکا جاسکے.

“لیزر دیواروں نے کام کرنا شروع کر دیا ہے اور ان کے ذریعے نگرانی کی جا رہی ہے. غیر قانونی نقل و حرکت کا پتہ لگانے میں ابتدائی طور پر نتائج حوصلہ افزا ہیں،

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں