The news is by your side.

Advertisement

بھارت : اس سال حیدرآبادی حلیم نہیں ملے گی

حیدرآباد : کورونا وائرس نے لوگوں کے منہ سے ذائقے بھی چھین لیے، بھارت کی عالمی شہرت یافتہ ڈش حیدرآبادی حلیم اس سال رمضان میں دستیاب نہیں ہوگی۔

دنیا بھر میں حیدرآبادی حلیم کو بہت زیادہ پسند کیا جاتا ہے جبکہ اس ڈش کے لیے تمام مذاہب اور فرقے کے لوگ اور خصوصاً حیدرآبادی عوام ماہ رمضان کا انتظار کرتے ہیں لیکن اس سال انہیں مایوسی ہوگی۔

اس سلسلے میں حلیم بنانے والوں نے فیصلہ کیا ہے کہ اس ماہ رمضان میں حلیم کی فروخت مکمل طور پر بند رہے گی۔

حیدرآباد حلیم میکرز ایسوسی ایشن اور ٹوئن سٹیز ہوٹل اونرز ایسوسی ایشن کی جانب سے ایک اجلاس منعقد کیا گیا جس میں مختلف ہوٹل مالکان نے شرکت کی۔

اجلاس میں کورونا وائرس سے پیدا شدہ حالات اور ریاست میں جاری لاک ڈان کی صورتحال پر تفصیلی غور و خوص کیا گیا اور اس سال رمضان میں حلیم فروخت نہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔

اجلاس میں اس بات پر بھی متفقہ طور فیصلہ کیا گیا کہ 7 مئی کے بعد اگر لاک ڈاون میں نرمی کی جائے تب بھی تمام رمضان ہوٹلز میں حلیم فروخت نہیں کی جائے گی، شرکا نے وائرس کو پھیلنے سے روکنے کےلیے سماجی فاصلہ کے اصول کو سختی سے اپنانے پرزور دیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں