The news is by your side.

Advertisement

بھارت: مسلمانوں کے شہر میں انتقال کے موقع پر ایک منفرد روایت

ناسک: بھارتی ریاست مہاراشٹر کے ضلع ناسک کے ایک شہر مالیگاؤں کی ایک منفرد روایت ہے جو شاید ہی کسی دوسرے شہر میں دیکھنے کو ملے۔

مہاراشٹر کا شہر مالیگاؤں دنیا بھر میں اپنی مسلم شناخت اور منفرد روایات کے لیے مشہور ہے، اس شہر میں ایک ایسی روایت قائم ہے جو گزشتہ کئی دہائیوں سے چلی آ رہی ہے۔

بھارت کے تقریباً تمام حصوں میں مسلم سماج میں جب کسی کا انتقال ہوتا ہے تو اس کی اطلاع مسجد سے اعلان کر کے لوگوں تک پہنچائی جاتی ہے، تاہم اگر اعلان کے وقت کوئی گھر یا علاقے میں موجود نہ ہو تو اسے میت کی خبر بروقت نہیں مل پاتی اور وہ جنازے میں شرکت سے محروم ہو جاتا ہے۔

دوسری طرف شہر مالیگاؤں میں کئی عشروں سے میت کی اطلاع لوگوں تک پہنچانے کے لیے ’پُکارے والے‘ یعنی اناؤنسر کا سہارا لیا جاتا رہا ہے جو شہر کی ہر گلی ہر محلے میں سائیکل یا موٹر سائیکل کے ذریعے میت کا اعلان کرتا ہے۔

اس خدمت کے لیے پکارے والے کو معمولی ہدیہ دیا جاتا ہے، تاہم وہ یہ کام شوق اور ایمان داری سے کرتا ہے۔

اناؤنسر حضرات محض انتقال کی خبر ہی نہیں دیتے بلکہ میت کی تجہیز و تکفین کے سارے کام بھی انجام دیتے ہیں، جس میں میت کو غسل دینا، کفن کے سامان کی فراہمی، قبرستان میں انتظامات سنبھالنا وغیرہ شامل ہیں۔

بتایا جاتا ہے کہ مالیگاؤں والے پانچ دہائی قبل دکان و مکان کی خرید و فروخت کے لیے بھی پُکارے والوں کی خدمات لیتے تھے، جو ہر گلی محلے جا کر اعلان کرتے تھے، دل چسپ بات یہ ہے کہ یہاں اب بھی بڑے بڑے شورومز، دکانیں اور اسپتال وغیرہ اپنی تشہیر کے لیے انھی پکارے والوں کی خدمات حاصل کرتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں