The news is by your side.

Advertisement

بھارت: ’پیٹ بھرنے کے لیے کھانا نہیں ہے‘ مسلمان ڈرائیور رو پڑا

نئی دہلی: بھارت میں عالمگیر وبا کے تناظر میں لاک ڈاؤن کے باعث ٹیکسی ڈرائیور بھی بے روزگار ہوگیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق بھارت سمیت کئی ممالک میں غریب شہری لاک ڈاؤن سے شدید متاثر ہیں، کئی خاندان دو وقت کی روٹی بہت مشکل سے کھا رہے ہیں۔

اسی ضمن میں بھارت کا بے بس مسلمان ڈرائیور بھی لاک ڈاؤن سے شدید متاثر ہے، مقامی میڈیا کو انٹرویو دیتے ہوئے محمد انصاری نامی شہری آب دیدہ ہوگیا۔ غربت مٹانے کے دعویدار مودی کے اقدامات کی قلعی کھل گئی۔

بھارت لاک ڈاؤن، ’ہم یہاں پر بھوکے مرجائیں گے‘ بیروزگار نوجوان کی ویڈیو وائرل

متاثرہ شخص کا کہنا تھا کہ ’ہمارے پاس پیٹ بھرنے کے لیے کھانا نہیں ہے، دیہاڑی کمانے کے لیے باہر جاتے ہیں تو پولیس ڈنڈے مار کر گھر بھیج دیتے ہے، ایسی صورت حال میں ہم کہاں جائیں؟

بوڑھے شہری نے بے بسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ میرے پاس اتنے پیسے نہیں کہ کھانا خرید کر اپنا اور گھر والوں کا پیٹ بھرسکوں۔ قبل ازیں نئی دہلی میں لاک ڈاؤن کے دوران بیروزگار نوجوان کی ویڈیو وائرل ہوئی تھی جس میں وہ کہہ رہا تھا کہ ’ہمارے پاس ایک روپیہ بھی نہیں ہے، ہم یہاں پر بھوکے مرجائیں گے‘۔

Comments

یہ بھی پڑھیں